جاپان کے ارب پتی شخص کو چاند پر جانے کے لیے شریک حیات کی ضرورت

وساکو میزاوا تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption فیشن انڈسٹری کا بڑا نام 44 سالہ یوساکو میزاوا سٹارشپ راکٹ پر چاند کا سفر کرنے والے پہلے سویلین مسافر ہوں گے

جاپان کے ارب پتی شخص یوساکو میزاوا ایک ایسی خاتون ’شریک حیات‘ کی تلاش میں ہیں جو چاند کے سفر میں ان کا ساتھ دے سکے۔

44 برس کے یوساکو میزاوا فیشن انڈسٹری کا بڑا نام ہیں اور وہ سٹارشپ راکٹ پر چاند کے گرد سفر کرنے والے پہلے سویلین مسافر ہوں گے۔

سنہ 2023 کے لیے بنایا گیا یہ مشن سنہ 1972 کے بعد انسانوں کا پہلا قمری سفر ہو گا۔

اپنے آن لائن پیغام میں میزاوا نے کہا ہے کہ وہ یہ تجربہ ایک ’خاص خاتون‘ کے ساتھ شیئر کرنا چاہتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

آخر چینی ایک ’نقلی چاند‘ کیوں بنانا چاہتے ہیں؟

چاند پر لے جانے والے نئے راکٹ کا پہلا مرحلہ مکمل

چین چاند پر آلو اگائے گا

یوساکو میزاوا حال ہی میں اپنی 27 سالہ گرل فرینڈ ایامی گوریکی سے الگ ہوئے ہیں، اور انھوں نے اپنی ویب سائٹ پر خواتین کو کہا کہ وہ اس رشتے کے لیے اسی ویب سائٹ پر درخواست داخل کریں۔۔

انھوں نے اپنی ویب سائٹ پر لکھا: ’تنہائی اور خالی پن کا احساس جیسے جیسے مجھ پر طاری ہو رہا ہے، تو میں صرف ایک چیز کے بارے میں سوچتا رہتا ہوں اور وہ ہے: ’ایک عورت سے ہی پیار کرتے رہنا۔‘

انھوں نے مزید کہا: میں ایک ’شریک حیات‘ تلاش کرنا چاہتا ہوں۔ میں مستقبل کی اپنی اس ساتھی کے ساتھ خلا سے اپنے پیار اور دنیا کے امن کی آواز بلند کرنا چاہتا ہوں۔‘

ویب سائٹ پر درخواست کے تین ماہ کے عمل کا شیڈول اور شرائط بھی دی گئی ہیں۔

ڈیٹنگ پروفائل انداز میں لکھی گئی شرائط کے مطابق درخواست کنندہ کا سنگل ہونا، عمر 20 برس سے زائد، مثبت خیالی اور خلا میں جانے کے لیے دلچسپی کا ہونا ضروری ہے۔

درخواست جمع کرانے کی آخری تاریخ 17 جنوری ہے اور میزاوا کے شریک حیات کا حتمی فیصلہ مارچ کے اختتام پر کیا جائے گا۔

ایک میوزک بینڈ میں ڈرمر سے مقبولیت حاصل کرنے والے میزاوا، اپنے توجہ حاصل کرنے والے سٹنٹس کی وجہ سے بھی خاصے مشہور ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ SPACEX
Image caption ایلن مسک کی کمپنی سپیس ایکس سنہ 2023 میں خلائی سفر کا منصوبہ رکھتی ہے

اس ماہ کے شروع میں میزاوا نے اپنی ٹویٹس شیئر کرنے والے کسی بھی سو افراد کے درمیان دس کروڑ یین بانٹنے کا وعدہ کیا تھا۔

انھوں نے کہا ’حصہ لینے کے لیے آپ کو بس مجھے فالو کرنا ہے اور اس ٹویٹ کو شیئر کرنا ہے۔‘

کپڑوں کی آن لائن جاپانی کمپنی زوزو کے بانی میزاوا نے فیشن انڈسٹری سے دولت کمائی۔

ان کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ ان کی ذاتی دولت تقریباً تین ارب ڈالر ہے، جس کا بڑا حصہ وہ آرٹ پر خرچ کرتے ہیں۔

گزشتہ برس، امریکہ کی ارب پتی کاروباری شخصیت ایلن مسک کی کمپنی سپیس ایکس کے چاند کے گرد چکر لگانے کے مشن کا پہلا نجی مسافر قرار دینے پر میزاوا کی مقبولیت میں اضافہ ہوا۔

میزاوا خلا میں جانے کے ٹکٹ کے لیے کتنی رقم دینے پر رضامند ہوئے،یہ سامنے نہیں آ سکا لیکن ایلسن مسک کے مطابق ’یہ بہت زیادہ رقم تھی۔‘

میزاوا کا کہنا ہے کہ وہ اس پرواز میں اپنے ساتھ فنکاروں کا ایک گروپ لے جانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

اسی بارے میں