#coronavirus: چین میں نومولود بچے میں کورونا وائرس کی تشخیص

کورونا وائرس

،تصویر کا ذریعہGetty Images

چین میں پیدا ہونے والے ایک بچے میں پیدائش کے صرف 30 گھنٹے بعد کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ سرکاری میڈیا کے مطابق یہ بچہ کورونا وائرس سے متاثر ہونے والا اب تک کا سب سے کم عمر فرد ہے۔

یہ بچہ دو فروری کو ووہان کے ایک مقامی ہسپتال میں پیدا ہوا، جو کہ اس وبا کا مرکز ہے۔

بچے کی پیدائش سے قبل بچے کی والدہ کے ٹیسٹ کیے گئے تھے جو مثبت آئے تھے تاہم ابھی تک یہ واضح نہیں ہو سکا کہ یہ بیماری کیسے منتقل ہوئی۔

اس وائرس سے متاثرہ افراد میں بچوں کی تعداد کم ہی ہے تاہم اس سے اب تک 563 افراد ہلاک جبکہ 28 ہزار اٹھارہ افراد متاثر ہو چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

چین کے نیشنل ہیلتھ کمیشن کے مطابق ہلاک ہونے والے 80 فیصد افراد کی عمریں 60 سال سے زائد تھیں جبکہ ان 80 فیصد افراد میں سے 75 فیصد وہ تھے جو پہلے ہی کسی نہ کسی بیماری کا شکار تھے۔

سرکاری میڈیا نے بدھ کے روز یہ اطلاع دی کہ کورونا وائرس کے ساتھ پیدا ہونے والے اس بچے کا وزن سوا تین کلو ہے اور اس کی حالت اب ٹھیک ہے جبکہ اسے زیر مشاہدہ رکھا گیا ہے۔

،تصویر کا ذریعہGetty Images

ایک سینئر معالج نے ہانگ کانگ کے اخبار ساؤتھ چائنہ مارننگ پوسٹ کو بتایا کہ یہ کیس اشارہ ہے کہ ’ہمیں وائرس کے ممکنہ نئے ٹرانسمیشن روٹ کے بارے میں فکر مند ہونے کی ضرورت ہے۔‘

یہ وائرس دوسرے ممالک میں بھی پھیل چکا ہے اور چین سے باہر اس سے متاثرہ 191 کیس سامنے آئے ہیں تاہم ان میں ہلاکتوں کی تعداد صرف دو ہے۔

چین کے علاوہ دیگر ممالک میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیشِ نظر عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) اسے ایک عالمی ایمرجنسی قرار دے چکا ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے سربراہ ٹیڈروس اڈہانم نے بدھ کے روز تین ماہ کی جوابی منصوبہ بندی کے لے 675 ملین ڈالر کے فنڈ کی اپیل کی ہے۔

واضح رہے کہ چین کے صوبے ووہان میں کورونا وائرس کی وبا سے نمٹنے کے لیے ایک ہزار بستروں کے ایک ہسپتال کی تعمیر صرف دس روز میں مکمل کی گئی ہے۔