عراق الیکشن: سابق وزیر اعظم کی سبقت

عراق کے پارلیمانی انتخابات میں سابق وزیراعظم ایاد علاوی کے اتحاد نے سب سے زیادہ نشستیں حاصل کر لی ہیں۔

ایاد علاوی
Image caption سابق عراقی وزیر اعظم ایاد علاوی

سات مارچ کو ہونے والے انتخابات کے حتمی نتائج کا اعلان کرتے ہوئے حکام نے کہا کہ علاوی کے اتحاد کو موجودہ وزیر اعظم نوری المالکی پر دو سیٹوں کی سبقت ہے۔

اس سے قبل عراق میں اقوام متحدہ کے ایلچی نے انتخابات کو شفاف قرار دیا اور عراقیوں سے نتائج کو تسلیم کرنے کے لیے کہا۔

دریں اثنا دیلہ صوبے میں دو بم دھماکوں میں کم سے کم چالیس افراد ہلاک اور ساٹھ سے زیادہ زخمی ہوئے ہیں۔

عراقی پارلیمان کی تین سو پچیس نشستوں پرچھ ہزار بیس امیدواروں نے چھیاسی مختلف جماعتوں کی طرف سے انتخاب لڑا تھا۔ ان انتخابات میں ووٹنگ کا تناسب باسٹھ فیصد رہا جو کہ پانچ سال قبل ہونے والے عام انتخابات سے تقریباً تیرہ فیصد کم تھا۔

چھ ہزار بیس امیدواروں نے چھیاسی مختلف جماعتوں کی طرف سے انتخاب لڑا تھا۔ ان انتخابات میں ووٹنگ کا تناسب باسٹھ فیصد رہا جو کہ پانچ سال قبل ہونے والے عام انتخابات سے تقریباً تیرہ فیصد کم تھا۔

اسی بارے میں