آخری وقت اشاعت:  جمعرات 29 اپريل 2010 ,‭ 01:18 GMT 06:18 PST

ارجنٹائن میں نمک کا ’سمندر‘

  • سطحِ سمندر سے تیرہ ہزار فٹ کی بلندی پر ارجنٹینا کا یہ انڈیز پہاڑی علاقہ ایک عجیب سرزمین ہے۔ یہاں مشکل سے ہی کچھ اگتا ہے اور چند ہی جانور ایسے ہیں جو یہاں کی بلندی اور سردی برداشت کر سکتے ہیں۔ انہی پہاڑوں کے درمیان ایک جھیل چمکتی دکھائی دیتی ہے لیکن یہ ایک نمک کی جھیل ہے۔
  • دو سو مربع میل پر پھیلی نمک کی یہ وادی دسمبر سے مارچ کے دوران بارش کے پانی کی وجہ سے زیرِ آب رہتی ہے جبکہ باقی سال میں چند مقامی افراد نمک کے اس سمندر سے نمک نکال کر اپنی گزر بسر کر تے ہیں۔
  • پھاوڑوں، کلہاڑوں اور ہتھوڑوں جیسے روایتی اوزاروں کی مدد سے پچاس سنٹی میٹر گہرے تالاب کھودے جاتے ہیں اور یہاں سے نمک کے کرسٹل نکلتے ہیں۔ ہر تالاب سے سالانہ اوسطاً ڈھائی ٹن نمک نکلتا ہے۔
  • چالیس درجہ سنٹی گریڈ درجہ حرارت اور چار ہزار میٹر کی بلندی پر تیز ہوائیں جلد کو جلا ڈالتی ہیں اور نمک کا برادہ سانس کے ساتھ اندر جا کر پھیپھڑوں کو تباہ کر دیتا ہے۔ اس صنعت سے وابستہ افراد اپنے چہرے ڈھانپ کر ہی یہ کام کرتے ہیں۔
  • دن کے آغاز پر کارکن جھیل کنارے جمع ہوتے ہیں۔ یہ لوگ صبح ساڑھے سات بجے سے شام چھ بجے تک کام کرتے ہیں۔
  • نمک کے سوکھ جانے پر اسے پچاس کلو کی بوریوں میں بھر دیا جاتا ہے۔ ایک ٹن نان ریفائنڈ نمک کی قیمت اٹھارہ امریکی ڈالر ہے اور ایک ٹن نمک جمع کرنے میں ڈیڑھ دن لگتا ہے۔
  • یہ نمک ارجنٹینا کے جنوبی صوبوں میں فروخت کیا جاتا ہے جہاں نمک کی فی کلو قیمت ڈیڑھ ڈالر ہے۔
  • صرف نمک نکالنے سے بہت سے کارکنوں کی گزر بسر نہیں ہوتی اور وہ سیاحوں کے لیے نمک سے مختلف چیزیں بھی بناتے ہیں۔
  • پیڈرو نامی یہ کارکن روزانہ نمک سے پانچ لامہ بنا لیتا ہے جو ڈھائی ڈالر فی کس کے حساب سے بک جاتے ہیں۔ اس کے مطابق ’یہاں زندگی بہت سخت ہے لیکن ہمارے پاس کوئی متبادل نہیں‘۔
  • یہاں کام کرنے والے زیادہ تر افراد کئی نسلوں سے یہاں کام کر رہے ہیں اور اسی علاقے کے نواح میں رہتے ہیں۔
  • نمک کی اس وسیع و عریض وادی کو سیاحوں میں مقبول بنانے کی کوششیں بھی زیادہ کامیاب ثابت نہیں ہو سکی ہیں۔
  • یہاں کام کرنے والے نوجوان یہاں سے نکل جانا چاہتے ہیں اور ان کے خیال میں وہ اپنے والدین جیسا نہیں بننا چاہتے جن کی پوری زندگی نمک کا یہی سمندر تھا۔ تحریر و تصاویر: رفائیل استفانیہ

[an error occurred while processing this directive]

BBC navigation

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔