قندھار: نیٹو کے اڈے پر حملہ

افغانستان میں نیٹو نے کہا ہے کہ قندھار کے ہوائی اڈے پر مزاحمت کاروں کے حملے میں ان کے کئی اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔

نیٹو کےفوجی(فائل فوٹو)

ترجمان نے کہا کہ پہلے راکٹ اور مارٹر کے گولے فائر کیے گئے اور پھر اس کے بعد زمینی حملہ بھی ہوا۔ حکام نے بتایا کہ حملہ آوروں نے نیٹو کے اڈے میں داخل ہونے کی کوشش کی گئی لیکن اسے ناکام بنا دیا گیا۔

افغانستان میں کسی اہم فوجی مرکز پر گزشتہ چند روز میں یہ دوسرا حملہ ہے۔ اس سے قبل بدھ کو بگرام میں امریکی فوجی اڈے پر حملہ ہوا تھا۔

نیٹو نے بتایا کہ سنیچر کو ہی جنوبی افغانستان میں ایک اور حملے میں اس کے تین اہلکار اور ایک شہری ہلاک ہو گیا تھا۔

نیٹو کے مراکز پر یہ حملے اس وقت ہوئے ہیں جب برطانوی وزیر خارجہ ولیم ہیگ کی قیادت میں تین وزراء کی ٹیم ملک کا دورہ کر رہی ہے۔

قندھار میں حملے کا نشانہ بننے والے اڈے میں تئیس ہزار غیر ملکی فوجی اہلکار تعینات ہیں اور یہ اکثر حملوں کا نشانہ بنتا ہے۔