کینیڈا: دہشتگردی کے الزام میں تین گرفتار

کینیڈا کے پولیس حکام کا کہنا ہے کہ تین کینیڈین شہریوں کو دہشت گردی کی سازش کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے اور ان کے پاس بم بنانے کے آلات بھی برآمد ہوئے ہیں۔

ان تینوں پر دہشت گردی کی حمایت کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

ہیوا علیزادہ اور مصبح الدین احمد کو جمعرات کو ایک عدالت کے سامنے پیش کیا گیا جس کے بعد انھیں جیل بھیج دیا گیا۔

خرم شیر بھی ان تین ملزموں میں شامل ہیں اور کینیڈا کے اخبار ٹورنٹو سٹار کے مطابق ٹی وی پروگرام کینیڈین آئڈل کے لیے انھوں نے ناچ کیا تھا اور گانا گایا تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ تیس سالہ علیزادہ، چھبیس سالہ احمد اور اٹھائیس سالہ شیر کو دہشت گردی کی اعانت اور سازش کرنے کے الزامات کا سامنا ہے۔ علیزادہ کے پاس سے دھماکہ خیز مواد بھی برآمد ہوا ہے اور ان پر دہشت گردوں کو جگہ فراہم کرنے کا بھی الزام ہے۔

.انھوں نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کو بتایا کہ وہ کینیڈا کے عوام کے لیے ایک خطرہ تھے۔

انھوں نے کہا کہ ان گرفتاریوں سے بم بنانے اور دہشت گردی کی واردات کرنے کا خطرہ ٹل گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ یہ گروہ افغانستان میں اتحادی فوجیوں کے خلاف لڑنے والوں کی حمایت کرتا تھا۔ تاہم ابھی یہ واضح نہیں ہو سکا کہ اس گروہ کا کینیڈا میں کوئی حملہ کرنے کا منصوبہ تھا یا نہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انھوں نے بم بنانے کی ہدایات اور پچاس سے زیادہ سرکٹ بورڈ اپنے قبضے میں لیے ہیں جو کہ دور سے بم دھماکہ کرنے میں استعمال ہو سکتے تھے۔

خرم شیر نے ایک ٹی وی پروگرام کے آڈیشن میں گانا گایا اور ناچ بھی کیا۔ شیر نے اس پروگرام کے ججز کو بتایا کہ ان کا تعلق پاکستان سے ہے اور انھیں اداکاری، موسیقی اور ہاکی سے دلچسپی ہے۔

تاہم پولیس کے سپرانٹنڈنٹ نے یہ تصدیق کرنے سے انکار کردیا کہ جنھیں گرفتار کیا گیا ہے وہ وہی خرم شیر ہیں۔