برطانیہ:’دہشتگردی کی سازش، بارہ گرفتار‘

Image caption ’گرفتاریاں عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لیے ضروری تھیں‘

برطانوی پولیس کا کہنا ہے کہ ملک کے مختلف شہروں سے بارہ افراد کو برطانیہ میں دہشتگردی کے کارروائی کی سازش کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔

برطانیہ میں انسدادِ دہشتگردی یونٹ کے سربراہ اسٹنٹ کمشنر پولیس جان یٹس نے پیر کو ذرائع ابلاغ کو بتایا ہے کہ یہ گرفتاریاں ایک بڑے پیمانے پر ہونے والے آپریشن کے نتیجے میں عمل میں آئیں جس میں کئی شہروں کی پولیس نے حصہ لیا۔

ان کے مطابق گرفتار کیے جانے والے افراد میں سے پانچ کو کارڈف، چار کو سٹوک آن ٹرینٹ اور تین کو لندن سے حراست میں لیا گیا۔

برطانوی پولیس کے مطابق گرفتار کیے جانے والے افراد کی عمریں سترہ سے اٹھائیس برس کے درمیان ہیں اور انہیں پیر کی صبح برطانوی وقت کے مطابق پانچ بجے ان کے گھروں اور ان کے قریب واقع مقامات سے گرفتار کیا گیا ہے۔

اسٹنٹ کمشنر پولیس جان یٹس کے مطابق یہ گرفتاریاں عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لیے ضروری تھیں۔ انہوں نے کہا کہ حراست میں لیے جانے والے افراد سے دہشتگردی کی کارروائیوں کی منصوبہ بندی کے الزام کے تحت تفتیش کی جائے گی۔

تاہم انہوں نے دہشتگردی کے اس منصوبے کے بارے میں بتانے سے انکار کر دیا جس کی منصوبہ بندی کے الزام میں یہ افراد پکڑے گئے ہیں۔

برطانوی پولیس کے مطابق اس وقت گرفتار شدہ افراد کی رہائش گاہوں کے علاوہ لندن اور برمنگھم میں دو گھروں کی تلاشی کا عمل جاری ہے۔

اسی بارے میں