امریکہ: ائر بیس پر ہنگامی صورتحال ختم

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption الرٹ جاری ہونے کے بعد فضائی اڈے کے اطراف میں سڑکوں کو بند کر دیا گیا تھا

امریکہ میں حکام کا کہنا ہے کہ ریاست ایریزونا میں ایک بڑے فضائی اڈے میں سکیورٹی الرٹ ختم کر دیا گیا ہے۔

فضائی اڈے کی عمارت میں ایک شخص کے پستول لے کر داخل ہونے اور اپنے آپ کو مورچہ بند کر لینے کے بعد سکیورٹی الرٹ جاری کیا گیا تھا اور اڈے کو بند کر دیا گیا تھا۔

ڈیوس مونتھن ائرفورس اڈے کے کمانڈر کا کہنا ہے کہ کوئی مسلح شخص یا ہتھیار برآمد نہیں ہوئے ہیں۔

اس سے پہلے ایف بی آئی کے تفتیش کار موقع پر پہنچ گئے تھے جبکہ مقامی پولیس کا کہنا تھا کہ پولیس، یرغمالیوں کو بازیاب کرانے کے لیے مذاکرات کرنے والا یونٹ، اور بم ڈسپوزل سکواڈ کو بھی تیار رکھا گیا ہے۔

مسلح شخص کے داخل ہونے کی اطلاع کے بعد فضائیہ کے اڈے میں واقع دو ایلیمنٹری سکولوں سے طالب علموں کو بحفاظت نکال کر محفوظ مقام پر پہنچا دیا گیا تھا۔

سارجنٹ رس مارٹن نے خبر رساں ادارے اے پی کو بتایا کہ فضائیہ کے اڈے کو بند کرنے کا فیصلہ ایسی اطلاعات پر کیا گیا جن کے مطابق ایک شخص کو دیکھا گیا ہے جس کے ہاتھ میں کچھ ہے جو ہتھیار کی مانند لگتا ہے۔

’اس لیے یہ اڈہ بحران کی حالت میں چلا گیا ہے۔ ہم اڈے کو حفاظتی اقدامات کے تحت بند کر رہے ہیں۔‘

انہوں نے اس بات کی تصدیق کی کہ ایک ایمبولینس کو فضائیہ کے اڈے کی جانب بلایا گیا تھا تاہم وہ ایک حاملہ خاتون کو لینے آئی تھی جو ہسپتال کی جانب روانہ کردی گئی ہیں۔

اس سے قبل ایک مقامی ٹی وی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر کے ذریعے بتایا تھا کہ فضائیہ کے اڈے میں ایک شخص کئی گولیاں لگنے کے باعث زخمی ہوگیا ہے۔

تاہم کچھ ہی دیر بعد فضائیہ کے اڈے کے ایک ترجمان نے اس بات کی تردید کی تھی۔

فضائیہ کے اڈے کے اہلکاروں کا کہنا ہے کہ اڈے کو بند کیے جانے کے احکامات کے بعد اس کے اطراف میں ٹریفک کو بند کردیا گیا۔