’پاکستانی فوج بمباری بند کرے‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

افغانستان کے حکام نے پاکستان کی فوج پر سرحد پار سے افغان علاقے میں سینکڑوں مارٹر اور راکٹ فائر کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔

افغانستان کے شمال مشرق صوبے کنڑ کے گورنر فضل اللہ واحدی نے کہا ہے کہ پاکستانی فوج کی طرف سے داغے جانے والے راکٹوں ااور مارٹروں کی زد میں آ کر ایک بچہ ہلاک ہو گیا جب کہ کئی مسجدوں سمیت نجی املاک کو نقصان پہنچا ہے۔

انھوں نے راکٹ اور ماٹر داغے جانے کے اس سلسلے کو فوری طور پر بند کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

پاکستان نے سرکاری اہلکاروں کی ایسی کسی کارروائی میں ملوث ہونے کی تردید کی ہے۔

انھوں نے افغان حکام پر الزام عائد کیا کہ وہ دہشت گردوں کو افغانستان کے اندر پناہ دے رہے ہیں۔

اسی بارے میں