بنکاک:’حملے کا ہدف اسرائیلی سفارتکار تھے‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بنکاک پولیس دھماکوں کی تفتیش کر رہی ہے

تھائی پولیس کا کہنا ہے کہ بنکاک میں دھماکوں کے سلسلے میں جن افراد کو گرفتار کیا گیا تھا ان کا ہدف دو اسرائیلی سفارتکار تھے۔

پولیس حکام نے ان سفارتکاروں کے بارے میں مزید تفصیلات فراہم نہیں کی ہیں۔

اس وقت دو افراد جو کہ ایرانی بتائے جاتے ہیں بنکاک میں جبکہ ایک تیسرا شخص ملائیشیا میں زیرِ حراست ہے۔ ان کے علاوہ چوتھا ملزم مفرور ہے۔

بنکاک میں دھماکوں کا واقعہ جارجیا اور بھارت میں اسرائیلی سفارتکاروں کو نشانہ بنائے جانے کے واقعات کے ایک دن بعد پیش آیا تھا۔

دلّی میں ہونے والے حملے میں ایک اسرائیلی سفارتکار زخمی ہوا تھا جبکہ جارجیا میں اسرائیلی سفارتکار کی گاڑی سے چپکایا گیا بم ناکارہ بنا دیا گیا تھا۔

اسرائیل نے ایرانی حکومت کو ان حملوں کا ذمہ دار قرار دیا ہے جبکہ ایران نے اس الزام کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ حملے خود اسرائیل نے کروائے ہیں۔

اسرائیل نے بھارت میں اسرائیلی سفارتکار کی کار میں ہونے والے بم دھماکے کی تفتیش کے لیے اسرائیلی وزارت دفاع اور خفیہ سروس کے ماہرین کی ایک ٹیم دلی بھی بھیجی ہے۔

اسی بارے میں