وکی لیکس نےخفیہ ای میلز کو شائع کر دیا

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

انٹرنیٹ پر خفیہ راز افشا کرنے والی ویب سائٹ وکی لیکس نے امریکہ کی سکیورٹی سے متعلق ایک تھنک ٹینک سٹراٹفر کی پچاس لاکھ سے زیادہ ای میلز کو شائع کرنا شروع کر دیا ہے۔

وکی لیکس کا کہنا ہے کہ ان دستاویزات سے لوگوں کو سٹراٹفر کے ڈھانچے، کالے دھن کو جائز کرنے اور اس کے نفسیاتی حربوں کے بارے میں آگاہی حاصل ہو گی۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال دسمبر میں انٹرٹیٹ ہیکرز نے تھنک ٹینک سٹراٹفر کے کمپیوٹرز کو ہیک کر لیا تھا۔

سٹیراٹفر کے سربراہ فرائیڈمین کا کہنا ہے کہ ان حالات میں کمپنی کے خلاف سازش کرنے والوں کو مایوسی ہو گی۔

سٹراٹفر کے ترجمان نے وکی لیکس پر ای میلز شائع ہونے سے پہلے خبردار کیا کہ وہ ان ای میلز کی صداقت یا غلط ہونے کے بارے میں کوئی تبصرہ نہیں کریں گے۔

دوسری جانب وکی لیکس نے ان دستاویزات کے بارے میں یہ نہیں بتایا کہ انہوں نے یہ کہاں سے حاصل کیں تاہم گمان یہی ہے کہ وکی لیکس نے ان معلومات کو انٹرنیٹ ہیکرز سے حاصل کیا۔

وکی لیکس کا کہنا ہے کہ یہ دستاویزات جولائی سنہ دو ہزار چار سے لے کر گزشتہ سال دسمبر کے دورانیے پر مشتمل ہیں۔

وکی لیکس کے بانی جولین اسانژ نے برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کو بتایا کہ یہ بات باعثِ تشویش ہے کہ اس طرح کی کپمنیاں ایک خاص ہدف کے تحت کام کرتی ہیں۔

اسی بارے میں