شام کے شہر حلب میں کار بم دھماکہ

شام میں دھماکے(فائل فوٹو) تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption شام میں ایک سال میں آٹھ ہزار سے زیادہ لوگ ہلاک ہو چکے ہیں: اقوام متحدہ

شام سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق حلب شہر میں ایک ’خوفناک کار بم دھماکہ‘ ہوا ہے۔

حزب اختلاف کے ذرائع کے مطابق دھماکے کے نیتجے میں کئی لوگ ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں لیکن فوری طور پر ان کی درست تعداد نہیں بتائی جا سکتی۔

اس حملے سے ایک ہی روز قبل سنیچر کو حکام کے مطابق دمشق میں بارود سے لدی ہوئی دو گاڑیوں کے پھٹنے سے ستائیس افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

یہ واقعہ سکیورٹی کے اداروں کے دفاتر کے قریب پیش آیا تھا۔

دمشق اور حلب میں حالیہ ہفتوں میں بم حملوں میں درجنوں لوگ ہلاک ہو چکے ہیں۔ حکومت کا کہنا ہے کہ یہ حملے دہشتگردوں نے کروائے ہیں۔حزب اختلاف ان میں سے کچھ حملوں کے لیے حکام کو ذمہ دار ٹھہراتی ہے۔

شام میں صحافیوں کو آزادانہ طور پر کام کرنے میں رکاوٹوں کی وجہ سے ان خبروں کی تصدیق نہیں ہو سکی۔

اتوار کو الیپو میں ہونے والے تازہ ترین حملے شام میں صدر بشار الاسد کی حکومت کے خلاف احتجاج شروع ہونے کی پہلے سالگرہ سے چند روز پہلے ہوئے ہیں۔ اقوام متحدہ کے اندازوں کے مطابق اس ایک سال کے دوران اب تک آٹھ ہزار سے زیادہ لوگ ہلاک ہو چکے ہیں۔

اسی بارے میں