عنان کے منصوبے پرعمل درآمد کو یقینی بنایا جائے

فرانس کے وزیرِ خارجہ لارنس فیبیو تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption شام خانہ جنگی کی سمت بڑھ رہا ہے:لارنس فیبیو

فرانس کے وزیرِ خارجہ لارنس فیبیو نےسلامتی کونسل سے اپیل کی ہے کہ شام سے متعلق کوفی عنان کے امن منصوبے پر عمل درآمد کو لازمی قرار دیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ وہ یہ تجویز رکھیں گے کہ اقوامِ متحدہ کے چیپٹر سات کے ضابطوں کے تحت مسٹر عنان کے چھ نکاتی امن منصوبے کو نافذ کیا جائے۔

فرانس کے وزیرِ خارجہ کا کہنا تھا کہ شام خانہ جنگی کی سمت بڑھ رہا ہے۔

دریں اثناء امریکی وزیرِ خارجہ ہلیری کلنٹن نے روس کو خبردار کیا ہے کہ اگر اس نے شام کے مسئلے پر مثبت رویہ اختیار نہیں کیا تو خطے میں اس کے مفادات کو نقصان پہنچے گا۔

واشنگٹن میں نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ روس کہتا ہے کہ وہ شام میں امن استحکام چاہتا ہے اور مشرقِ وسطی میں وہ اپنے مفادات اور اہم تعلقات کو برقرار رکھنا چاہتا ہے ، محترمہ کلنٹن نے کہا کہ اگر روس ذمہ دارانہ رویہ اختیار نہیں کرتا تو اسے ان تعلقات اور مفادات سے ہاتھ دھونا پڑے گا۔

کل ہی امریکی وزیرِ خارجہ نے روس پر شام کو ہیلی کاپٹر مہیا کرانے کا الزام لگایا تھا جس کی روسی وزیرِ خارجہ سرگئی لیواروف نے سختی سے تردید کی تھی۔

تہران کے اپنے دورے کے دوران انہوں نے کہا کہ روس، شام یا کسی دوسرے ملک کو ایسے کوئی بھی ہتھیار سپلائی نہیں کر رہا جو مظاہرین کے خلاف استعمال کیے جا سکیں انہوں نے مزید کہا کہ اس کے برعکس امریکہ لگاتار خطے میں اسلحہ مہیا کر رہا ہے۔

فرانسیسی وزیرِ خارجہ کے بیان کے بعد امریکی وزیرِ خارجہ نے روس سے اپیل کی کہ وہ مذاکرات کی میز پر آئے۔

تاہم روس اور چین چیپٹر سات کی قرارداد پر رضامند نہیں ہونگے جس کے تحت طاقت کے استعمال اجازت دینے کی بات کی گئی ہے۔

اسی بارے میں