’عسکری رجحان میں اضافے سے اجتناب ضروری‘

تصویر کے کاپی رائٹ s
Image caption اطلاعات کے مطابق حکومت مخالف فورسز بچوں کو انسانی ڈھال کے طور پر استعمال کر رہی ہیں: نوی پِلے

اقوامِ متحدہ کے ادارہ برائے انسانی حقوق کی سربراہ نوی پِلے نےاپیل کی ہے کہ شام کے بحران میں عسکری رجحان کے مزید فروغ سے ہر ممکن طریقے سے اجتناب کیا جانا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ شام میں حکومت اور حزب اختلاف کی کارروائیوں میں نقصان عام شہریوں کو پہنچ رہا ہے۔

دریں اثناء ترکی کے سرکاری ٹیلی ویژن کے مطابق پیر کو شام کے اسی منحرف فوجی سرحد پار کر کے ترکی پہنچ گئے ہیں۔

انسانی حقوق کی سربراہ نوی پِلے نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سے مطالبہ کیا ہے کہ شام کے بحران کو جرائم کی عالمی عدالت میں پیش کیا جائے۔

نوی پِلے نے اپنے بیان میں کسی ملک کا نام نہیں لیا لیکن عام رائے یہ ہے کہ قطر اور سعودی عرب شام کے منحرف فوجیوں یا باغیوں کو ہتھیار اور معاوضہ ادا کر رہے ہیں۔

اس کے علاوہ ایران اور روس پر الزام ہے کہ وہ حکومتی سکیورٹی فورسز کو مسلح کر رہے ہیں۔

اقوام متحدہ میں بی بی سی کی نمائندہ باربرا پلٹ کے مطابق نوی پِلے نے مزید کہا کہ شامی سکیورٹی فورسز طبی مراکز پر حملے کر رہی ہیں جب کہ باغیوں نے کم از کم ایک طبی مرکز پر قبضہ کیا ہے تاکہ اسے عسکری مقاصد کے لیے استعمال کیا جا سکے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption شام کے اسی منحرف فوجی سرحد پار کر کے ترکی پہنچ گئے ہیں: ترک ٹی وی

نوی پِلے نے مزید کہا کہ شام سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق حکومت مخالف فورسز بچوں کو انسانی ڈھال کے طور پر استعمال کر رہی ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ شام میں اقوام متحدہ کے امن مشن کے دائرہ کار کو بڑھانے کی ضرورت ہے تاکہ یہ شام میں حقوق انسانی کی خلاف ورزیوں کی موثر انداز میں معلومات فراہم کر سکے۔

دریں اثناء ترکی کے سرکاری ٹیلی ویژن کے مطابق پیر کو شام کے اسی منحرف فوجی سرحد پار کر کے ترکی پہنچ گئے ہیں۔

ترکی میڈیا نے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ ترکی پہنچنے والے شامی فوجیوں میں ایک جنرل اور متعدد افسران شامل ہیں۔

یہ اطلاع ایک ایسے وقت آئی ہے کہ جب گزشتہ ہفتے شامی سکیورٹی فورسز کے ایک جنرل، دو کرنل، دو میجرز سمیت تیس منحرف فوجی ترکی پہنچ گئے۔

گزشتہ ماہ شام کی جانب سے ترکی کے ایک جنگی جہاز کو مار گرائے جانے کے بعد دونوں ممالک کے تعلقات میں پہلے سے موجود کشیدگی میں اضافہ ہوا ہے۔

اسی بارے میں