کیلی فورنیا: تیز رفتار ٹرین کی منظوری

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption ٹرین لائن کے منصوبے پر حتمی لاگت کا تخمینہ اڑسٹھ بلین ڈالر لگایا گیا ہے

کیلی فورنیا کے قانون سازوں نے امریکہ میں پہلی تیز رفتار بلٹ ٹرین چلانے کے منصوبے کی منظوری دی ہے۔

امریکی سینیٹ نے سولہ کے مقابلے میں اکیس ووٹوں سے لاس اینجلس سے سان فرانسسکو کے درمیان چلائی جانے والی ایک سو تیس میل منصوبے کی منظوری دی۔

اس منصوبے کے مخالفین کا کہنا ہے کہ ٹرین پر خرچ کیا جانے والا پیسہ بیکار ہے، جبکہ حامیوں کا کہنا ہے کہ یہ ایک ضروری منصوبہ ہے۔

لاس اینجلس اور سان فرانسسکو ٹرین لائن کے منصوبے پر حتمی لاگت کا تخمینہ اڑسٹھ بلین ڈالر لگایا گیا ہے۔

اس منصوبے پر آنے والی لاگت کو کیلی فورنیا کے ایوان زیریں کی اسمبلی کی جانب سے جمعرات کو منظور کیا گیا۔

ریپبلکن سینیٹر ٹونی سٹیرک لینڈ نے اس منصوبے پر ہونے والی بحث کے دوران کہا کہ یہ کیلی فورنیا کے لیے ایک بھاری مالی ٹرین کا ملبہ ہے۔

دوسری جانب بہت سے ڈیموکریٹس کا کہنا ہے کہ آبادی میں اضافے کے ساتھ تیز رفتار ٹرین کا منصوبہ ریاست کے مستقبل کے لیے ضروری تھا۔

سان فرانسسکو کے ساحلی اور سلیکان ویلی کے علاقوں سے کچھ کاروباری رہنماؤں نے اس منصوبے کے لیے کی جانے والی پیمائش کی حمایت کی تھی اور حالیہ ہفتوں میں اس حوالے سے کی جانے والی قانون سازی کے لیے لابنگ کی تھی۔