امریکہ: سمندری طوفان فلوریڈا کے قریب

آخری وقت اشاعت:  پير 27 اگست 2012 ,‭ 21:51 GMT 02:51 PST

ابھی تک یہ واضح نہیں ہو سکا کہ طوفان کس وقت ساحلی علاقوں سے ٹکرائے گا

امریکی ریاست فلوریڈا کے جنوبی علاقوں میں سمندری طوفان کے پیش نظر ہنگامی حالت کا نفاذ کر دیا گیا ہے۔

سمندری طوفان’آئزک‘ کی وجہ سے ہزاروں افراد نقل مکانی کر کے محفوظ علاقوں کی جانب جا رہے ہیں۔ جس کی وجہ سے گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئی ہیں۔

طوفان کے ابتدائی اثرات کی وجہ سے ہزاروں افراد پہلے ہی بجلی سے محروم ہو چکے ہیں۔ اس کے علاوہ سینکڑوں پروازوں کو منسوخ کر دیا گیا ہے۔

سمندری طوفان سے متعلق امریکہ کے ادارے نیشنل ہریکین سینٹر کے مطابق سمندری طوفان کیٹگری دو یا درجہ دوئم میں داخل ہو سکتا ہے اور جب یہ ساحلی علاقوں سے ٹکرائے گا تو طوفانی ہواؤں کی رفتار ایک سو پانچ میل فی گھنٹہ ہو گی۔

سمندری طوفان کی شدت کی وجہ سے یہ اپنے مرکز کے اطراف میں دو سو میل تک تباہی پھیلا سکتا ہے۔

ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ طوفان کس وقت ساحلی علاقوں سے ٹکرائے گا تاہم ایک اندازے کے مطابق رواں ہفتے کے وسط میں یہ ریاست فلوریڈا اور لوئزیانا کے سرحدی علاقے سے ٹکرائے گا۔

طوفان کے نیو آرلینز کے ساحلی علاقوں سے بھی ٹکرانے کا خدشہ ہے جہاں سات سال پہلے ان دنوں میں ہی سمندری طوفان قطرینہ سے بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی تھی۔

اس سمندری طوفان نے پہلے ہی مشرقی کیوبا اور ہیٹی میں تباہی پھیلائی، جس کے نتیجے میں کم از کم چھ افراد ہلاک ہو گئے۔

لوگوں نے سمندری طوفان سے بچاؤ کے لیے اپنے مکانات کی کھڑکیوں اور دروازوں کو لکڑی کے تختوں سے مضبوط کرنا شروع کر دیا ہے

سمندری طوفان کی شدت میں اضافے کے خدشے کے پیش نظر دیگر ساحلی ریاستوں کو بھی الرٹ کر دیا گیا ہے۔

ہریکین سینٹر کے مطابق مطابق اتوار کو گرینج کے معیاری وقت کے مطابق طوفان جنوب، جنوب مشرقی علاقوں سے اسی کلومیٹر دور تھا اور یہ تیس کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے مغرب، شمالی مغرب کے علاقوں کی جانب بڑھ رہا ہے۔

حکام کے مطابق طوفان کی وجہ سے خلیج میکسیکو میں تیل کی چوبیس فیصد اور گیس کی آٹھ فیصد پیداوار بند کر دی گئی ہے۔

ریاست کے گورنر ریک سکاٹ نے ہنگامی حالت کا نفاذ کر دیا ہے اور اس بات کو یقینی بنایا جا رہا ہے کہ جب طوفان ساحلی پٹی سے ٹکرائے گا تو امدادی ادارے پوری طرح سے تیار ہوں۔

لوگوں نے سمندری طوفان سے بچاؤ کے لیے اپنے مکانات کی کھڑکیوں اور دروازوں کو لکڑی کے تختوں سے مضبوط کرنا شروع کر دیا ہے اور مکانات کے باہر ریت سے بھری بوریوں سے حفاظتی بند بنا رہے ہیں۔

ریاست میں سیاسی جماعت ریپبلکن پارٹی کی جانب سے آئندہ انتخابات میں صدارتی امیدوار مٹ رومنی کی باقاعدہ نامزدگی کے حوالے سے ٹمپا شہر میں ایک تقریب کو بھی ملتوی کر دیا گیا ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔