چین: نائب صدر کی غیر حاضری پر قیاس آرائیاں

آخری وقت اشاعت:  منگل 11 ستمبر 2012 ,‭ 23:43 GMT 04:43 PST

چین کی کمیونسٹ پارٹی کے نئے ممکنہ سربراہ شی جنپنگ کی کئی اہم ملاقاتوں اور اجلاسوں سے غیر حاضری کے بعد ان کے مستقبل کے حوالے سے چہ مگوئیاں شروع ہو گئی ہیں۔

ایک ہفتے کے دوران چین کے نائب صدر شی جنپنگ کی چار ملاقاتیں منسوخ کی گئی ہیں۔ ان کی یہ ملاقاتیں چین کے دورے پر گئے دوسرے ممالک کے رہنماؤں سے ہونی تھیں۔ وہ حال ہی میں پارٹی کی ایک میٹنگ میں بھی غائب تھے۔

چین کی وزارت خارجہ کے حکام نے گزشتہ ہفتے کہا تھا کہ ڈنمارک کے وزیر اعظم کے دورے کے دوران ان کی اور شی کی ملاقات طے ہے۔ تاہم اب اس بات سے انکار کیا جا رہا ہے کہ یہ ملاقات طے نہیں تھی۔

شی جنپنگ اس سے پہلے چین کے دورے پر گئی امریکی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن سے بھی نہیں ملے تھے۔ روس اور سنگاپور سے آئے نمائندوں سے بھی ان کی ملاقات نہیں ہو پائی تھی۔

اس سے پہلے کہا جا رہا تھا کہ اگلے ماہ ہونے والے پارٹی کے سالانہ اجلاس میں شی جنپنگ کو ملک کا نیا لیڈر منتخب کیا جانا تھا۔

ملک میں جاری قیاس آرائیوں کے باوجود کوئی سرکاری بیان سامنے نہیں آیا ہے۔

جس پارٹی کانگریس میں شی جنپنگ کو مستقبل کے لیڈر کا اعلان کیا جانا تھا اس کی تاریخ سے متعلق بھی تب تک کوئی اعلان نہیں کیا گیا جس سے پارٹی میں اقتدار کے لیے کشمکش سے متعلق چہ مگوئیوں کو ہوا ملی ہے۔

چین کو حال ہی میں ایک بہت بڑے سیاسی سکینڈل کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ پارٹی میں تیزی سے ابھر رہے لیڈر بو زیلائی کی بیوی کی ایک برطانوی تاجر کے قتل میں ملوث ہونے کی بات سامنے آئی تھی اور انہیں اس لئے گرفتار کیا گیا تھا. ۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔