قدیم تحریر میں عیسیٰ کی ’بیوی‘ کی طرف اشارہ

آخری وقت اشاعت:  بدھ 19 ستمبر 2012 ,‭ 15:07 GMT 20:07 PST
قدیم نسخہ

نسخے میں پہلی مرتبہ حضرت عیسیٰ کی بیوی کا ذکر کیا گیا ہے

عیسائیوں کی تاریخ کی ایک مستند ماہر کے مطابق ایک قدیم کاغذ میں لکھی گئی ایک تحریر میں حضرت عیسیٰ کی ’بیوی‘ کی طرف اشارہ کیا گیا ہے۔

ہارورڈ یونیورسٹی کی پروفیسر کیرن کنگ نے اٹلی کے شہر روم میں ایک کانفرنس کے دوران چوتھی صدی کا ایک کاپٹک نسخہ پیش کیا۔

انہوں نے کہا کہ تحقیق کاروں نے ان الفاظ کی شناخت کی ہے جن میں کہا گیا ہے کہ ’عیسیٰ نے ان سے کہا، میری بیوی‘۔ تحقیق کاروں کا خیال ہے کہ یہ میری میگدالین کی طرف اشارہ ہو سکتا ہے۔

عیسائیوں کی روایات کے مطابق حضرت عیسیٰ نے شادی نہیں کی تھی، لیکن کیون کنگ کا کہنا ہے کہ عیسائیت کے ابتدائی دور میں یہ تصور قابلِ بحث تھا۔

ان کا کہنا ہے کہ اس دریافت کے بعد شادی نہ کرنے اور عیسائیت میں خواتین کے کردار پر ایک بحث چھڑ سکتی ہے۔

کیرن کنگ

کیرن کنگ کہتی ہے کہ اس سے عیسائیت میں خواتین کے مقام کے متعلق نئی بحث چھڑ سکتی ہے

لیکن اس اعلان پر چند مذہبی سکالرز نے اپنے شک کا بھی اظہار کیا ہے۔

ٹینیسی کے ایک بیٹسٹ پیسٹر اور پروفیسر جم ویسٹ کہتے ہیں کہ ’کاغذ کے ایک قدیم نسخے پر کوئی تحریر کسی چیز کا ثبوت نہیں ہے۔ یہ اسی طرح ہے جس طرح ہوا میں کوئی تحریر ہو، بغیر کسی ٹھوس ثبوت کے۔‘

کیرن کنگ کا کہنا ہے یہ تحریر جو کہ قدیم مصری کاپٹک زبان میں لکھی گئی ہے، ابھی تک ملنے والا پہلا نسخہ ہے جس میں حضرت عیسیٰ نے اپنی بیوی کا ذکر کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ چوتھی صدی کا یہ ٹیکسٹ کسی صحیفے کی نقل ہے جو کہ ہو سکتا ہے دوسری صدی میں لکھا گیا ہو۔

کئی ماہرین نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ نسخہ نہایت قدیم ہے لیکن اس کے متن پر کوئی بھی فیصلہ مزید تحقیق کے بعد ہی ممکن ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔