غزہ: حماس کے عسکری ونگ کے سربراہ ہلاک

آخری وقت اشاعت:  بدھ 14 نومبر 2012 ,‭ 15:10 GMT 20:10 PST

احمد جباری کی ہلاکت کے بعد غزہ میں فائرنگ ہو رہی ہے

فلسطینی تنظیم حماس کا کہنا ہے کہ غزہ میں اسرائیل کے فضائی حملے میں اس کے عسکری ونگ کے سربراہ ہلاک ہو گئے ہیں۔

اسرائیل کا کہنا ہے کہ فضائی کارروائی میں حماس کے رہنما احمد جباری کو نشانہ بنایا گیا تھا کیونکہ وہ ایک دہائی سے دہشت گرد سرگرمیوں میں ملوث تھے۔

احمد جباری چار سال پہلے اسرائیل کے غزہ پر زمینی حملے کے بعد اسرائیل کے ہاتھوں ہلاک ہونے والے سب سے سینیئر رہنما ہیں۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ احمد جباری اپنی گاڑی میں غزہ شہر میں سفر کر رہے تھے کہ اس دوران دھماکے سے ان کی گاڑی پھٹ گئی۔

اطلاعات کے مطابق اسرائیلی کارروائی میں احمد جباری کے نائب بھی ہلاک ہو گئے ہیں۔

اسرائیل کی انٹیلیجنس ایجنسی شاباک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ’ جباری اسرائیل کے خلاف حملوں، ملڑی آپریشنز اور مالی وسائل مہیا کرنے کے ذمہ دار تھے۔‘

بیان کے مطابق’ آج ان کی ہلاکت غزہ میں حماس کے اہلکاروں کے لیے ایک پیغام ہے کہ اگر وہ اسرائیل کے خلاف دہشت گردی کو فروغ دیتے رہے تو انہیں نقصان پہنچے گا۔‘

غزہ میں بی بی سی کے نامہ نگار کے مطابق گلیوں میں فائرنگ کی آوازیں سنائی دے رہی ہیں، شہر میں بہت زیادہ غم و غصہ پایا جاتا ہے اور خوف کی فضاء ہے کہ حملے کے بعد تشدد میں اضافہ ہو گا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔