کالج آف جرنلزم کی ویب سائٹ اردو میں

آخری وقت اشاعت:  پير 26 نومبر 2012 ,‭ 14:56 GMT 19:56 PST
بی بی سی کالج آف جرنلزف

بی بی سی کالج آف جرنلزم میں صحافت کے اعلیٰ معیار اور اقدار پر مواد موجود ہیں

بی بی سی کالج آف جرنلزم چار زبانوں میں اپنی ویب سائٹس شروع کر رہا ہے۔ ان زبانوں میں اردو، آسان چینی، روایتی چینی اور ہوسا شامل ہیں۔

ان میں نشریات میں استعمال کی جانے والی غیر تعصبانہ زبان اور درست زبان دونوں پر ہی توجہ دی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ بی بی سی کی صحافتی اقدار کو بھی پیش کیا گیا ہے۔

مختلف زبانوں میں اپنے اپنے شعبے میں کام کرنے والے بی بی سی کے نامہ نگاروں اور پروڈیوسروں کے کام اور کالج آف جرنلزم کے اشتراک سے معلومات کا ایک ایسا خزانہ تیار ہو رہا ہے جو بی بی سی کے صحافیوں کو لندن اور لندن کے باہر دنیا بھر میں گراں قدر تعاون فراہم کرے گا۔

یہ مفت ویب سائٹ دنیا بھر کے لاکھوں صحافیوں کو بی بی سی میں استعمال ہونے والی سٹائل گائیڈ دیکھنے کا موقع فراہم کرتی ہے۔

اردو

اردو زبان کی ویب سائٹ پر ملٹی میڈیا کے ہنر، بی بی سی کی اقدار اور زبان و بیان پر خاطر خواہ مواد اور ویڈیوز دستیاب ہیں۔

کلِک کالج آف جرنلزم کی اردو ویب سائٹ پر جانے کے لیے یہاں کلک کریں

اس کے دوسرے حصوں میں ’ریپ‘ جیسے ممنوعہ الفاظ کے استعمال کے بارے میں معلومات فراہم کی گئی ہیں۔ پاکستان کے زیادہ ترمیڈیا میں اس لفظ کے استعمال سے اجتناب برتا جاتا ہے اور اس کے شکار فرد کے لیے عصمت دری جیسے لفظ کا استعال کیا جاتا ہے۔ لیکن بی بی سی سمجھتی ہے کہ ریپ کے عمل کو ریپ ہی کہنا چاہیے نہ کہ کچھ اور۔

اردو سروس میں ٹیلی ویژن کے لیے کیسے لکھیں اس بارے میں بھی مشورے فراہم کیے گئے ہیں۔ یہ ان معنوں میں بہت ہی مفید ہے کیونکہ بی بی سی اس سال کے آخر میں ایک نجی چینل کے ساتھ شراکت میں اردو کی ٹی وی نشریات شروع کر رہا ہے۔

چینی

ایک دوسرے سے منسلک دو طرح کی چینی زبانوں میں ویب سائٹوں کو شروع کرنا اپنے آپ میں ایک چیلنج تھا۔ ہمیں اس کے لیے ہر طرح کے صارفین کے استعمال کے لیے چینی زبان کی ایک ایسی ویب سائٹ شروع کرنی پڑی جس میں ہر ویب صفحے کے داہنی جانب ایک بٹن ہوگا جوکہ سہل پسند اور روایتی چینی زبان میں مواد کو پڑھنے کے لیے فراہم کیا گیاہے۔ سہل پسند چینی زبان چین کے اہم حصوں میں استعمال ہوتی ہے جبکہ روایتی چینی اور اس کی تحریری شکل چین کے باہر استعمال ہوتی ہے۔

چینی زبان کی روایتی اور سہل پسند دونوں اقسام کی ویب سائٹوں پر زبان کا ایک مکمل سیکشن موجود ہے۔ اس سیکشن میں قواعد کے اہم نکات، زبان کی نشونما اور توسیع، نئی اصطلاحات، ممنوعہ الفاظ، نیوز روم میں ترجمہ کے اصول زریں، آن لائن کی زبان اور سب سے بڑھ کر غیرجانبدار زبان پر رہنمائی شامل ہے۔

بی بی سی کے اقدار کے شعبے میں بی بی سی کی چینی سائٹ دوسرے مواد کے ساتھ بی بی سی کی ادارتی گائڈلائنز بھی شائع کر رہی ہے کہ کس طرح ویئیبو کا استعمال کرنا چاہیے۔ ویئیبو ٹوئیٹر کی طرح کی چینی زبان کی ویب سائٹ ہے اور اس کو استمعال کرنے ولوں کی تعداد پچیس کروڑ ہے۔

ہوسا

کالج آف جرنلزم کی نئی ہوسا ویب سائٹ ہوسا زبان کے قواعد اور ٹائپوگرافی یعنی عبارت کی ظاہری شکل و صورت کے متعلق مکمل گائید شائع کر رہی ہے۔

جب ہم ہوسا زبان کی ویب سائٹ بنا رہے تھے تو ہمارے سامنے ایک ساتھ کنڈی کی شکل میں جڑنے والے تین حروف کو صحیح ڈھنگ سے دکھانے کا چیلنج تھا کیونکہ اس کی عدم موجودگی میں ہم صوت الفاظ اس کے معنی میں ابہام پیدا کرتے اور معنی تبدیل ہو جاتے۔

جب ہم لوگوں نے ہوسا زبان کے شعبے سے بات کی تو انھوں نے کہا کہ وہ بھی چاہتے ہیں کہ کنڈی کی شکل میں جڑنے والے حروف اور دوسرے عام حروف کے درمیان فرق واضح ہو سکے کیونکہ وہ اس طرح کے حروف کے آگے ایک قسم کا اعراب یا علامت لگاتے ہیں تاکہ مفہوم میں فرق نہ آجائے۔ اس لیے ہم اپنی ویب سائٹ پر ہجے اور املا کے متعلق مضامین شائع نہ کر سکے اور ہم درست صورت والے حروف کی تلاش میں رہے۔ جب ہمیں وہ مل گئے تو ہم نے ہوسا سروس کے شعبے سے بات کی۔

ہوسا کی ویب سائٹ پر بھی سماجی رابطے کے استعمال کے متعلق مواد ہے۔ اس کے ساتھ غیر جانبداری، آزادی، صحیح اور جوابدہ ادارتی اقدار پر بھی مواد موجود ہے۔

آئندہ موسم گرما میں ہم برمی، پشتو، سواہیلی اور ویت نامی زبانوں کی ویب سائٹ شروع کرنے کے بارے میں منصوبہ بنا رہے ہیں۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔