پاکستان سری لنکا میں سکول تعمیر کرے گا

آخری وقت اشاعت:  اتوار 2 دسمبر 2012 ,‭ 16:05 GMT 21:05 PST
سیما الہی

سری لنکا میں پاکستان کی سفیر سیما الہی بلوچ نے سنیچر کو ایک تین منزلہ سکول کی عمارت کا سنگ بنیاد رکھا ہے۔

یہ سکول جنوبی سری لنکا کے معروف شہر وونیا کے قریب ایک مسلم آبادی والے علاقے میں تعمیر کیا جا رہا ہے۔

اس موقع پر سری لنکا کے وزیر تعلیم رشاد بدرالدین بھی موجود تھے۔

سنگ بنیاد ڈالنے کے بعد سیما الہی نے اساتذہ، طلبہ اور مقامی افراد سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم کے میدان میں تعاون سے پاکستان سرلنکا کی دیرینہ دوستی مزید مستحکم ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ ’میں وزیر تعلیم رشاد بدرالدین کے ہمراہ یہاں آئی تو ہم اس بات پر غور کر رہے تھے کہ پاکستان اس شعبے میں کس طرح اپنے دیرینہ دوست ملک سری لنکا کے ساتھ تعاون کر سکتا ہے۔‘

سیما الہی بلوچ نے کہا کہ’جب میں یہاں آئی تو میں نے دیکھا کہ کئی درجےکے بچے ایک ہی کمرے میں پڑھائی کر رہے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ہمیں یہاں جو سب سے خاص بات نظر آئی وہ اس علاقے کے لوگوں کی تعلیم میں گہری دلچسپی تھی۔

پاکستانی سفیر نے کہا کہ ’حالانکہ یہاں آباد ہونے والوں کو دوسری بنیادی سہولتیں میسر نہیں ہیں لیکن تعلیم کے لیے ان کا انہماک قابل قدر ہے۔‘

انہوں نے مزید کہا کہ جب بچے ان میں تعلیم حاصل کریں تو وہ پاکستان کو اپنی دعاؤں میں یاد رکھیں۔

سری لنکا کے وونیا سے ہمارے نامہ نگار منیکا واسگم کے مطابق اس سکول کی تعمیر پر ڈھائي کروڑ سری لنکلن روپے خرچ ہوں گے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔