قیدیوں کے بچوں کو ماں کا پیار دینے والی خاتون

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 8 دسمبر 2012 ,‭ 13:26 GMT 18:26 PST
پشپا

پشپا نے اپنی زندگي ایسے مجبور بچوں کے لیے وقف کر دی ہے

نیپال کی رہنے والی 28 سال کی پشپا بسنیٹ جب بھی کسی قیدی کے بچے کو دیکھتی ہیں تو انہیں اپنی پناہ میں لے لیتی ہیں اور وہ یہ کام گزشتہ آٹھ سال سے کر رہی ہیں-

ایسے بچے جن کے والدین جیلوں میں قید ہیں انہیں پناہ دینا، تعلیم دینا اوراس سب سے بڑھ کر ماں کا پیار دینا ان کا مشغلہ ہے۔

انہیں اس کے لیے 2012 کا سی این این ہیرو آف دی ایئر کے ایوارڈ سے نوازا گيا ہے۔ سی این این نے دنیا بھر میں اس کے لیے آن لائن ووٹنگ کروائی تھی۔

جب وہ اس ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئی تھیں تو انہوں نے بی بی سی نيپالی سروس سے کہا تھا کہ اگر وہ کامیاب ہوتی ہیں تو اس پیسے کا استعمال بچوں کو بہتر سہولیات مہیا کرنے کے لیے استعمال کریں گی۔

سی این این ہیرو ایوارڈ جیتنے والی پشپا ایسی دوسری نيپالی خاتون ہیں۔ اس سے قبل انورادھا كوئرالا نامی ایک دیگر نیپالی خاتون کو بھی یہ اعزاز مل چکا ہے۔

پشپا کو بچے پیار سے ماموں بلاتے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ دو لاکھ 50 ہزار ڈالر کی انعامی رقم کا استعمال وہ ان اسّی بچوں کو نيپالی جیلوں سے باہر لانے میں خرچ کریں گی جو بغیر غلطی کے وہاں رہنے پر مجبور ہیں۔

"میں نے آٹھ ماہ کی ایک بچی کو جیل میں دیکھا۔ اس کا اور اس کے جیسے اور بچوں کی درد میرے دل کو چھوگیا۔ مجھے لگا کہ ان کے لیے کچھ کرنا چاہیے اور میں اس کام میں مصروف ہوگئی۔"

پشپا

اکثر قیدیوں کے بچوں کو جیل میں بند اپنے غریب والدین کے ساتھ رہنا پڑتا ہے کیونکہ ان کی دیکھ بھال کرنے والا کوئی نہیں ہوتا۔

پشپا کہتی ہیں کہ جو 46 بچے ان کے ساتھ رہتے ہیں ان میں سے کئی نے خوفناک قسم کے جرائم دیکھے ہیں۔

بی بی سی سے بات چیت میں انہوں نے کہا ’پانچ سال کی ایک بچی ہے جس کے ساتھ اس کے ہی والد نے جنسی زيادتی کی تھی کیونکہ اس کی ماں کسی کے ساتھ بھاگ گئی تھی۔ کئی بچے توگھریلو تشدد کا شکار ہوتے ہیں۔‘

پشپا کے لیے یہ سلسلہ اس وقت شروع ہوا جب یونیورسٹی کی طرف سے وہ ایک مقامی جیل کا دورہ کرنےگئی تھیں۔

وہ کہتی ہیں " میں نے آٹھ ماہ کی ایک بچی کو جیل میں دیکھا۔ اس کا اور اس کے جیسے اور بچوں کی درد میرے دل کو چھوگیا۔ مجھے لگا کہ ان کے لیے کچھ کرنا چاہیے اور میں اس کام میں مصروف ہوگئی۔ ''

پشپا کہتی ہیں کہ وہ شادی نہیں کرنا چاہتیں۔

لاس اینجلس میں ایک شاندار تقریب میں پشپا نے ایوارڈ حاصل کرتے ہوئے ان بچوں کو یاد کیا جن کی وہ دیکھ بھال کرتی ہیں۔

انہوں نے کہا " یہ ایوارڈ میرے لیے بہت معنی رکھتا ہے۔ جیل میں اب بھی 80 بچے ہیں۔ میں یقین سے کہہ سکتی ہوں کہ ماموں آپ کو جیل سے باہر لے کر آئے گی۔"

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔