’شام میں مذاکرات اور سیاسی حل کی ضرورت‘

آخری وقت اشاعت:  منگل 25 دسمبر 2012 ,‭ 12:15 GMT 17:15 PST

پوپ بینیڈکٹ نے شام کے لوگوں کے لیے امن کی دعا کی۔

عیسائیوں کے مذہبی پیشوا پوپ بینیڈکٹ نے شام میں جاری خونریزی کے خاتمے پر زور دیا ہے۔

کرسمس کے موقع پر ویٹیکن میں اپنے روایتی پیغام میں انہوں نے شام کے بارے میں اپنی اِس اپیل کو دہرایا ہے۔

ہزاروں زائرین سے خطاب کرتے ہوئے پوپ بینیڈکٹ نے شام میں مذاکرات اور سیاسی حل کی ضرورت پر زور دیا۔ ’میں خونریزی کے خاتمے اور پناہ گزینوں تک امداد کی رسائی کی اپیل کرتا ہوں۔‘

شام میں دو ہزار گیارہ کے اوائل میں حکومت کے خلاف شروع ہونے والی تحریک کے بعد سے اب تک دسیوں ہزار افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

پوپ بینیڈکٹ نے شام کے لوگوں کے لیے امن کی دعا کی۔

انہوں نے اپیل کی کہ امدادی تنظیموں کو پناہ گزینوں تک رسائی کی اجازت ملنی چاہیے۔

کرسمس کے موقع پر عقیدت مندوں کا یہ اجتماع عموماً آدھی رات کو منعقد ہوتا ہے لیکن اِس مرتبہ اِسے دو گھنٹے پہلے کیا گیا تا کہ پچاسی برس کے پوپ کے لیے مشکل نہ ہو۔

اِس موقع پر پوپ نے عیسائیوں پر زور دیا کہ وہ اپنی تیز رفتار زندگی میں ’خدا‘ کے لیے بھی کچھ وقت اور جگہ رکھیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔