امریکی معاشی بحران: صدر اوباما ’پرامید‘

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 29 دسمبر 2012 ,‭ 02:04 GMT 07:04 PST

صدر اوباما کانگریس کے رہنماؤں سے ملاقات کے بعد نامہ نگاروں سے بات کر رہے ہیں

امریکی صدر براک اوباما نے وائٹ ہاؤس میں ایک اجلاس کے بعد کہا ہے کہ انھیں محتاط امید ہے کہ فِسکل کلف کہلانے والے معاشی بحران سے بچنے کے لیے معاہدہ طے پا جائے گا۔

صدر اوباما اور سینیٹ کے رہنما ایک قرارداد کے مسودے پر کام کر رہے ہیں جسے کانگریس کے دونوں ایوانوں میں حمایت حاصل ہو سکے۔

صدر نے کہا کہ اگر کوئی سمجھوتا طے نہ پا سکا تو وہ ٹیکسوں میں اضافہ روکنے کے لیے ووٹنگ کے لیے کہیں گے۔

کانگریس کے پاس کسی سمجھوتے تک پہنچنے کے لیے صرف چار دن بچے ہیں جس کے بعد تمام طبقوں کے ٹیکسوں میں اضافہ ہو جائے گا اور اخراجات میں خودکار کٹوتی نافذالعمل ہو جائے گی۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اگر امریکہ اس بحران کا شکار ہوا تو نہ صرف وہ خود کساد بازاری کے دہانے پر پہنچ جائِے گا بلکہ اس سے دنیا بھر کی معاشی بحالی کو بھی دھچکا لگے گا۔

اگر سینیٹ میں اکثریتی رہنما ہیری ریڈ اور اقلیتی رہنما مچ مکونل کسی سمجھوتے پر نہ پہنچے تو صدر صدر اوباما اس بات کو یقینی بنانے کے لیے ووٹنگ کا مطالبہ کریں گے کہ ڈھائی لاکھ ڈالر سے کم سالانہ آمدن والے افراد کا ٹیکس نہ بڑھے اور بے روزگاری کا بیمہ جاری رہے۔

انھوں نے کہا کہ یہ وہ کم سے کم حد ہے جس پر کانگریس کو یکم جنوری سے پہلے پہلے عمل کرنا ہو گا۔

صدر اوباما نے کہا، ’فوری اقدام کا وقت اب اور ابھی ہے۔‘

اس سے قبل جمعے کے روز صدر اوباما نے ہیری ریڈ، مچ مکونل، ایوان کے سپیکر جان بینر اور ایوان میں اقلیتی رہنما نینسی پلوسی سے ایک گھنٹے تک ملاقات کی۔

مکونل اور ریڈ نے کہا کہ وہ اس اجلاس کے بعد آپس میں ملیں گے اور انھوں نے اپنے مقررہ کام کے بارے میں مثبت تخمینہ دیا۔

حالیہ ہفتوں میں معاشی بحران پر بحث و تکرار سے واشنگٹن دو حصوں میں بٹ کر رہ گیا ہے۔ صدر اوباما اور جان بینر کرسمس سے پہلے کسی سمجھوتے پر نہ پہنچ سکے تھے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔