سعودی عرب:90 سالہ دولہا کی 15 سالہ دلہن

آخری وقت اشاعت:  منگل 8 جنوری 2013 ,‭ 01:13 GMT 06:13 PST

سعودی عرب میں کم عمر لڑکیوں کے ساتھ عمر رسیدہ مردوں کی شادیوں کے کئی واقعات سامنے آ چکے ہیں

سعودی عرب میں ایک نوے سالہ شخص کی پندرہ سالہ لڑکی سے شادی کے معاملے پر شدید بحث چھڑ گئی ہے۔

سعودی عرب میں مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹوئٹر اور سماجی رابطوں کی ویب سائٹ فیس بک پر شادی کی شدید مذمت کی جا رہی ہے۔

کچھ سعودی شہریوں کا کہنا ہے کہ آیا یہ معاملہ انسانی سمگلنگ یا بچوں سے بدسلوکی کا ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق نوے سالہ شخص نے پندرہ سالہ بچی سے شادی کے لیے سترہ ہزار امریکی ڈالر جہیز کے طور پر ادا کیے۔

سعودی عرب میں گذشتہ کچھ سالوں کے دوران بچوں سے شادیاں کرنے کے کئی واقعات سامنے آ چکے ہیں۔

مقامی میڈیا کے مطابق شادی کی رات بچی اتنی خوفزدہ تھی کہ اس نے اپنے شوہر کو کمرے میں بند کر دیا اور وہاں سے بھاگ کی واپس اپنے والدین کے پاس پہنچ گئی۔

اطلاعات کے مطابق اس بچی کا شوہر جہیز کے طور پر ادا کی جانے والی رقم یا بچی کی واپسی کے لیے قانونی چارہ جوئی کا سوچ رہا ہے۔

بی بی سی کے مشرق وسطیٰ کے امور کے تجزیہ نگار سباسچین اشر کے مطابق اس واقعہ سے ظاہر ہوتا ہے کہ سعودی عرب میں سوشل میڈیا کس قدر تیزی سے عوامی بات چیت کا اہم ذریعہ بنتا جا رہا ہے جو پہلے بہت مبہم تھا۔

سعودی عرب میں ہزاروں کی تعداد میں چودہ سال سے کم عمر لڑکیوں کی امیر اور عمر رسیدہ مردوں کے ساتھ شادیوں کے واقعات کی اطلاعات ملتی ہیں۔

سعودی معاشرے میں شادی کی کم سے کم عمر کے تعین کرنے کی وسیع پیمانے پر حمایت کی جا رہی ہے اور حکام کا کہنا ہے کہ وہ ضمن میں کام کر رہے ہیں۔

تاہم سعودی عرب میں سخت قدامت پسند مذہبی رہنماؤں کی جانب سے اس کی مخالفت کی جا رہی ہے اور ان کا اصرار ہے کہ شادی سے پہلے صرف لڑکی کا بلوغت تک پہنچنا ضروری ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔