ممبئی حملے، ہیڈلی کو پینتیس سال قید کی سزا

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 25 جنوری 2013 ,‭ 21:04 GMT 02:04 PST

امریکہ میں ایک عدالت نے پاکستانی نژاد امریکی شہری ڈیوڈ کولمن ہیڈلی کو سال دو ہزار آٹھ میں ممبئی حملوں کی سازش میں اہم کردار ادا کرنے کے جرم میں پینتیس سال قید کی سزا سنائی ہے۔

شکاگو کی ایک عدالت کے جج نے باون سالہ ڈیوڈ کولمن ہیڈلی کو بارہ الزامات میں قصور وار ٹھہراتے ہوئے سزا سنائی۔

ان میں سے ایک پاکستان کے کالعدم شدت پسند گروپ لشکر طیبہ کو معاونت فراہم کرنے کا الزام ہے جس نے مبینہ طور پر بھارت کے شہر ممبئی میں سال دو ہزار آٹھ میں دہشت گرد حملے کیے تھے۔

ممبئی حملوں میں چھ امریکیوں سمیت کم از کم ایک سو ستر افراد ہلاک ہوئے تھے جبکہ سینکڑوں دیگر زخمی ہوگئے تھے۔ ان حملوں میں شامل شدت پسندوں میں واحد زندہ بچ جانے والے شدت پسند اجمل قصاب کو گزشتہ سال نومبر میں بھارت میں پھانسی دے دی گئی تھی۔

حکام سے تعاون کرنے کی وجہ سے ڈیوڈ ہیڈلی سزائے موت یا بھارتی حکام کے حوالے کیے جانے سے بچ گئے۔

ڈیوڈ ہیڈلی نے ابتداء میں الزامات کی تردید کی تھی تاہم بعد میں انہوں نے ممبئی میں اہم ہداف کو نشانہ بنانے میں مدد فراہم کرنے کا اعتراف کیا تھا۔

تقریباً ساٹھ گھنٹے تک جاری رہنے والے ممبئی حملوں میں ایک سو ستر افراد ہلاک ہو گئے تھے

اس کے علاوہ انہوں نے پیغمبرِ اسلام کے توہین آمیز کارٹون شائع کرنے پر ڈینمارک کے ایک اخبار کے عملے کے سر قلم کرنے کے منصوبے میں مدد فراہم کرنے کا اعتراف بھی کیا تھا۔

ڈیوڈ ہیڈلی کو اکتوبر سال دو ہزار نو میں شکاگو میں ایف بی آئی کے اہلکاروں نے اس وقت گرفتار کیا تھا جب وہ فلاڈیلفیا جانے کے لیے جہاز پر سوار ہونے کی کوشش کر رہے تھے۔

رواں ماہ شکاگو کی ایک عدالت نے پاکستانی نژاد کینیڈیائی شہری تہور رانا کو ممبئی حملوں میں کردار ادا کرنے کے الزام میں چودہ سال قید کی سزا سنائی تھی۔

ڈیوڈ ہیڈلی تہور رانا کے پرانے دوست تھے تاہم اس کیس میں ہیڈلی رانا کے خلاف عدالت میں اہم گواہ بن جانے پر حکومت کی نظر میں ہیرو بن گئے تھے۔

شکاگو میں عدالتی جیوری نے تہور حسین رانا کو لشکر طیبہ کی امداد کے علاوہ ڈنمارک کے ایک اخبار پر حملہ کرنے کی منصوبہ بندی کا مجرم بھی قرار دیا تھا۔

شروع میں تہور رانا پر بھی ممبئی حملوں کی سازش میں ملوث ہونے کا الزام عائد کیا گیا تھا لیکن عدالت نے انہیں اس الزام سے بری کر دیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔