فرانسیسی طیاروں کی شمالی مالی پر بمباری

آخری وقت اشاعت:  پير 4 فروری 2013 ,‭ 22:20 GMT 03:20 PST

فرانسیسی طیاروں نے باغیوں کے تربیتی مراکز کو نشانہ بنایا ہے

فرانسیسی جنگی طیاروں نے مالی کے شمال میں بمباری کی ہے جہاں وہ تین ہفتے کی فوجی کارروائی کے بعد کیدال شہر کا دفاع مضبوط کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

30 طیاروں نے الجیریا کی سرحد کے قریب تیسالت کے پہاڑی علاقے میں اسلامی عسکریت پسندوں کے تربیتی اور مواصلاتی مراکز کو نشانہ بنایا ہے۔

فرانس کے صدر فرانسوا اولاند نے عزم ظاہر کیا ہے کہ وہ ملک کے شمال میں باغیوں کو شکست دینے کے بعد مالی کی تعمیرِ نو میں مدد دیں گے۔

تاہم خدشہ ہے کہ باغی کیدال کے قریب واقع پہاڑوں میں دوبارہ جمع ہو رہے ہیں۔

اگرچہ فرانسیسی فوج نے بدھ کے روز کیدال کے ہوائی اڈے پر قبضہ کر لیا تھا، تاہم شہر پر اب بھی طوارق قبیلے کے باغیوں (ایم این ایل اے) کا قبضہ ہے، جو شمالی مالی میں اپنے لیے نیا وطن بنانا چاہتے ہیں۔

مالی کے قائم مقام صدر ڈیوکونڈا تراؤرے نے کیدال کو محفوظ بنانے کے لیے ایم این ایل اے کے ساتھ مذاکرات کی پیش کش کی ہے۔

مالی کی صدر مقام باماکو میں بی بی سی کے نامہ نگار ٹامس فیسی کہتے ہیں کہ امن طاقت کی بجائے سفارت کاری ہی سے قائم ہو سکے گا۔

ہمارے نامہ نگار کے مطابق اس کے ساتھ ساتھ فرانس کی قیادت میں لڑنے والی افواج اسلامی عسکریت پسندوں کے تعاقب میں ہیں جو پہاڑی ٹھکانوں میں روپوش ہو گئے ہیں۔

فرانس کے صدر اولاند نے مالی کی امداد کا اعلان کیا ہے

ہفتے کے روز باماکو میں تقریر کرتے ہوئے فرانسوا اولاند نے فرانس کی اس سابق نوآبادی کے لیے مزید فرانسیسی امداد کا اعلان کیا تھا، اور اس عزم کا اظہار کیا تھا کہ مالی کے ثقافتی ورثے کو بحال کیا جائے گا جسے باغیوں کے ہاتھوں نقصان پہنچا ہے۔

ہفتے کے روز جب اولاند شمالی مالی کے تاریخی شہر ٹمبکٹو پہنچے تو ان کا گرم جوشی سے استقبال کیا گیا۔ اس شہر کو فرانسیسی اور مالی افواج نے ایک ہفتہ قبل آزاد کیا تھا۔

اس وقت مالی میں 3500 کے قریب فرانسیسی فوجی تعینات ہیں۔ اس کے علاوہ چاڈ اور نائجر کے 2000 فوجی بھی ان کی مدد کر رہے ہیں۔ مزید برآں، مالی کے لیے بین الاقوامی تعاون مشن کے 6000 فوجی بھی وہاں تعینات ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔