’گوادر پورٹ کا فیصلہ بلوچ قوم کے تابوت میں آخری کیل‘

آخری وقت اشاعت:  منگل 19 فروری 2013 ,‭ 04:27 GMT 09:27 PST

گورنر کا کہنا ہے کہ مقامی لوگوں کے معاشی مسائل حل ہوں گے تووہ صوبے کی تعمیر و ترقی میں حصہ لیں گے

پاکستان کے بلوچ قو م پرست رہنما سردار عطااللہ مینگل نے گوادر پورٹ کو چلانے کے لیے چینی کمپنی کے حوالہ کرنے کے فیصلے کو بلوچ قوم کے تابوت میں آخری کیل ٹھونکنے کے مترادف قرار دیا ہے۔

بزرگ بلوچ قوم پرست رہنما سردار عطاءاللہ مینگل نے گوادر بندر گاہ کو چین کے حوالے کرنے کے سلسلے میں جاری کیے جانے والے اپنے مختصر بیان میں کہا ہے کہ ’گوادر کی بندرگاہ چین کے حوالے کرنا بلوچوں کے تابوت میں آخری کیل ٹھونکنے کے مترادف ہے اور یہ آخری کیل ٹھونکنا انہیں مبارک ہو۔‘

دوسری جانب صوبہ بلوچستان کے گورنر نواب ذوالفقار علی مگسی نے گوادر پورٹ کو چلانے کے لیے چینی کمپنی کے حوالے کرنے کے بارے میں کہا ہے کہ معاہدے کی نیک نیتی پر مبنی ہونے سے بلوچستان کی موجودہ صورتحال میں مثبت تبدیلی رونما ہوگی۔

"گوادر کی بندرگاہ چین کے حوالے کرنا بلوچوں کے تابوت میں آخری کیل ٹھونکنے کے مترادف ہے اور یہ آخری کیل ٹھونکنا انہیں مبارک ہو"

سردار عطاءاللہ مینگل

معاہدے کے حوالے سے گورنر بوچستان کا منگل کی رات کو جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یہاں کے وسائل کی ترقی اور اسے بروئے کار لانے کے معاہدوں میں بلوچستان اور یہاں کے عوام کے مفادات کا ہر صورت میں تحفظ ہونا چاہیے۔

گورنر نے اس خواہش کا اظہار کیا کہ یہ معاہدہ بلوچستان کے عوام کےلیے خوش آئند ہو گا اور روزگار کے مواقعوں کے ساتھ ساتھ گوادر بندرگاہ سے حاصل ہونے والے فوائد و ثمرات یہاں کے عوام تک رسائی ہی وہ واحد راستہ ہے جس کے ذریعے بلوچستان کے عوام میں پائے جانے والا احساسِ محرومی اور صوبے کے وسائل کے استعمال کے حوالے سے ان کے تحفظات کو دور کیا جاسکتا ہے۔

گورنر کا کہنا ہے کہ مقامی لوگوں کے معاشی مسائل حل ہوں گے تووہ صوبے کی تعمیر و ترقی میں حصہ لیں گے۔

گورنر نے کہا کہ یہاں کے وسائل کو بروئے کار لانے کے حوالے سے ماضی میں عوام کی خواہشات اور امنگوں سے ہٹ کر کیے جانے والے فیصلے ناخوشگوار صورتحال کا موجب بنے لہذا ان وسائل کی ترقی کے معاہدوں میں ماضی کے ان تجربات کو ضرور مدِ نظر رکھنا چاہیے کیونکہ بلوچستان اس قسم کے مزید تجربات کا ہر گز متحمل نہیں ہوسکتا ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔