پیرس: ’فوجی پر حملہ کرنے والا گرفتار‘

پیرس: مشتبہ حملہ آور
Image caption پیرس کے مشتبہ حملہ آور کو بدھ کو پیرس سے 45 کلو میٹر جنوب مغرب میں گرفتار کیا

فرانس میں حکام کے مطابق پولیس نے سنیچر کو پیرس کے پاس ایک فوجی پر چاقو سے حملہ کرنے والے کے سلسلے میں ایک 22 سالہ نوجوان کو گرفتار کیا ہے۔

فرانسیسی وزیر داخلہ نے بتایا کہ پولیس نے حملے کے مشتبہ شخص کو بدھ کی صبح دارالحکومت پیرس سے 45 کلو میٹر جنوب مغربی علاقے سے گرفتار کیا۔

انھوں نے کہا یہ ’خطرناک شخص‘ موقعۂ واردات پر ملنے والے شواہد کی بنیاد پر پکڑا گیا۔

بدھ کو ٹی وی پر خطاب کرتے ہوئے فرانسیسی وزیر داخلہ اچانک کسی نتیجے پر پہنچنے سے متنبہ کیا۔

انھوں نے کہا ’میں محتاط رہنا پسند کروں گا۔ ہمیں اس کے مقصد، اس کے ماضی اور اس کے گھر کے ماحول کے بارے میں جاننے کی ضرورت ہے‘۔

Image caption افریقی ملک مالی میں فرانس کی فوجی مداخلت کے بعد وہاں ہائی الرٹ ہے

واضح رہے کہ یہ واردات لندن کے علاقے وولچ میں برطانوی فوجی لی رگبے کے قتل کے تین دن بعد ہوئی۔

ادھر فرانسیسی صدر فرانسوا اولاند نے کہا کہ واقعہ کے تمام پہلوؤں پر تفتیش کی جائے گا۔

اس سے پہلے عینی شاہدین نے حملہ آور کا حلیہ بتاتے ہوئے کہا تھا کہ اس کا تعلق شمال افریقی علاقے سے تھا اور اس نے داڑھی رکھی ہوئی تھی۔

حکام نے بتایا کہ اس شخص کو سکیورٹی کیمروں کے ذریعے دیکھا گیا کہ وہ اپنا لباس اتار کر یورپی لباس پہن کر بھاگ رہا تھا۔

القاعدہ کے شمال افریقہ گروپ کی جانب سے ملنے والی دھمکی کے بعد فرانس میں ہائی الرٹ ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ مہینوں میں فرانس افریقہ ملک مالی میں فوجی مداخلت میں شامل رہا ہے۔

اسی بارے میں