وینزویلا: عورتوں کے بال چوری ہونے میں اضافہ

صدر مدورو
Image caption صدر مدورو نے عورتوں کے بال کاٹنے والے ان گروہوں کے خلاف سخت الفاظ استعمال کیے ہیں۔

وینزویلا کے صدر نیکولس مادورو نے پولیس سے کہا ہے کہ وہ ان گروہوں کے خلاف کارروائی کریں جو عورتوں کے بال چوری کر رہے ہیں۔

یہ چور چوری کیے ہوئے یہ بال ان سلون میں فروخت کرتے ہیں جہاں مصنوعی بال لگانے کا کام کیا جاتا ہے۔

یہ گروہ کبھی کبھی بندوق کی نوک پر عورتوں کے بال اتار لیتے ہیں۔

مقامی میڈیا کے مطابق اس طرح کے حملوں میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور خاص طور پر ملک کے دوسرے بڑے شہر مارا کائی بو میں یہ مسئلہ بڑھ رہا ہے۔

صدر نیکولس مادورو نے عورتوں کے بال کاٹنے والے ان گروہوں کے خلاف سخت الفاظ استعمال کیے ہیں۔

دارالحکومت کراکس میں ایک ٹرین سٹیشن کا افتتاح کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت اس بات کی ضمانت دیتی ہے کہ ان لوگوں کو جلدی ہی پکڑ لیا جائے گا۔

متعدد عورتیں ایسے حملوں کا نشانہ بن چکی ہیں۔ بال چوری کرنے والے ان عورتوں سے پونی ٹیل بنانے کے لیے کہتے ہیں تاکہ بال آسانی سے کاٹے جا سکیں۔

تاہم وینزویلا میں بی بی سی کے نامہ نگار کا کہنا ہے کہ پولیس کو ابھی باقاعدہ شکایت درج کرائے جانے کا انتظار ہے۔

اسی بارے میں