میکسکو: مٹی کے تودے گرنے سے 14 ہلاک

میکسکو میں حکام کے مطابق ملک کے مشرقی علاقوں میں ہونے والے شدید بارشوں اور مٹی کے تودے گرنے سے چودہ افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ ریاست ویراکرز میں گھروں پر مٹی کا تودہ گرنے سے تیرہ افراد ہلاک ہوئے جبکہ ایک شخص اوکساکہ کے علاقے میں سیلابی ریلے میں ڈوب کر ہلاک ہوا۔

ریاست ویراکرز کے گورنر نے وفاقی حکومت سے 92 علاقوں میں ہنگامی حالت نافذ کرنے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ ان علاقوں کے رہائشی افراد کو بحالی کے فنڈز تک رسائی حاصل ہو سکے۔

ویراکرز کے سول ڈائریکٹر نوئمی گزمین لاگونیس نے کہا ہے کہ 300 افراد کو عارضی پناہ گاہوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ حالیہ بارشوں نے اوکساکہ کی دس فیصد بڑی شاہراہوں اور سڑکوں کو متاثر کیا ہے۔

امریکہ کے قومی ہریکین سینٹر جو سمندری طوفانوں پر نظر رکھتا ہے کا کہنا ہے کہ سمدنری طوفان فرنینڈ کے ساتھ پچاسی کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والی ہوائیں ہیں مگر زمین پر گرتے ہی ہوا کی رفتار کم ہو جاتی ہے۔

فرنینڈ جو ایک سمندری طوفان کے طور پر شروع ہوا تھا مگر اب اس کی رفتار کم ہو کر اب یہ ایک کم درجے کا طوفان بن گیا ہے۔

یہ اس سال کے بحرِ اقیانوس کے سمندری طوفانوں میں پانچواں طوفان ہے جسے ایک نام دیا گیا ہے۔

میکسکو میں سمندری طوفانوں کا موسم یکم جون سے یکم نومبر تک جاری رہتا ہے۔

اسی بارے میں