امریکہ:خواتین کو قیدی بنانے والے مجرم کی موت

Image caption میں بیمار اور سیکس کا عادی تھا: کاسترو

امریکی ریاست اوہائیو کے شہر کلیولینڈ میں تین خواتین کو اغوا کر کے اپنے گھر میں قید رکھنے والے مجرم ایریل کاسترو کی جیل میں موت ہو گئی ہے۔

انھیں اپنے سیل میں پھندے سے لٹکا ہوا پایا گیا تھا۔ جیل کے حکام نے کہا ہے کہ ان کی موت منگل کو دیر گئے ہسپتال میں ہوئی کیونکہ جیل کا میڈیکل سٹاف انہیں بچانے میں ناکام رہے۔

53 سالہ کاسترو نے تین خواتین کو ان کی مرضی کے خلاف اس سال مئی کے مہینے تک تقریباً ایک دہائی تک قید میں رکھا اور ان سے جنسی زیادتی کرتے رہے۔

امریکہ: خواتین کو قیدی بنانے پر عمر قید

امریکہ: دس سال سے لاپتہ خواتین بازیاب

کاسترو کو جب سیل میں لٹکا ہوا پایا گیا تو جیل کے میڈیکل سٹاف نے ان کی جان بچانے کی کوشش کی لیکن ناکامی کے بعد انہیں جیل کے ہسپتال روانہ کر دیا گيا جہاں امریکی وقت کے مطابق رات 52۔10 بجے انہیں مردہ قرار دیا گيا۔

اوہائیو کے آبادکاری اور اصلاح کے شعبے کی ترجمان جو ایلن سمتھ نے کہا: ’انہیں محفوظ حراست میں رکھا گیا تھا جس کا مطلب تھا کہ وہ ایک ایسے سیل میں تنہا تھے اور ہر 30 منٹ کے وقفے پر ان کی سیل کا راؤنڈ لگایا جاتا تھا۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ ’اس حادثے کے بارے میں تفصیلی تحقیقات جاری ہیں۔‘

اس سے قبل انھہیں امریکی عدالت نے تین خواتین کو تقریباً ایک دہائی تک قیدی بنانے پر عمر قید اور ایک ہزار سال قید کی اضافی سزا سنائی تھی۔

عدالت نے کاسترو کو اغواء ریپ اور ایک خطرناک قاتل سمیت سینکڑوں الزامات میں مجرم قرار دیا تھا۔

سابق سکول بس ڈرائیور نے 32 سالہ میشیل نائٹ، 27 سالہ امانڈا بیری اور 23 سالہ جیانا ڈی جیسس کو کلیولینڈ کی گلیوں سے سنہ 04-2002 کے دوران اغوا کیا تھا۔

اغوا کے وقت جینا کی عمر 14 سال تھی، امانڈا 16 سال کی تھیں جبکہ میشیل 21 سال کی تھیں۔

کاسترو کی گرفتاری اور تینوں خواتین کی بازیابی کے بعد چلنے والے مقدمے کے دوران کاسترو نے عدالت میں ایک غير مربوط بیان دیتے ہوئے کہا تھا کہ یہ سب ان کے سیکس کے عادی ہونے کی وجہ سے ہوا اور وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے نے اغوا کی پوری طرح سے تحقیقات نہیں کی ہیں۔

’مجھے یقین ہے کہ میں پورن کا عادی تھا اور اس نے مجھے اکسایا اور میں سمجھ ہی نہیں پایا کہ میں کچھ غلط کر رہا ہوں‘۔

تین خواتین میں سے ایک متاثرہ خاتون مشیل نائٹ نے عدالت میں بتایا تھا کہ انہوں نے گیارہ سال جہنم میں گزارے لیکن اب وہ اس سے باہر نکل پائیں گی کیونکہ وہ (کاسترو) اب ہمیشہ کے لیے جہنم میں رہے گا۔

اسی بارے میں