نو سالہ بچے نے ایک اور چوٹی سر کر لی

Image caption اس سے قبل گزشتہ برس ٹیلر آرمسٹرونگ افریقہ کی سب سے اونچی چوٹی ماؤنٹ کیلی منجارو کو سر کرچکے ہیں

ایک نو سالہ امریکی لڑکے نے جنوبی امریکہ کی سب سے بلند ترین چوٹی اکونکیوا کو سر کرلیا ہے۔

ٹیلر آرمسٹرونگ اس پہاڑ کو سر کرنے والے سب سے کم عمر شخص ہیں۔

ٹیلر آرمسٹرونگ اس پہاڑ کی چوٹی پر اپنے والد لوانگ دھوندپ کے ساتھ کرسمس کے موقع پر پہنچے جو تبت سے تعلق رکھنے والے شیرپا ہیں۔

ٹیلر آرمسٹرونگ کا کہنا تھا ’کوئی بھی بچہ یہ کارنامہ انجام دے سکتا ہے۔ صرف انہیں اس کو کرنے کی کوشش کرنی ہے اور اپنے ہدف پر دھیان دینا ہے۔‘

اس سے قبل گزشتہ برس وہ افریقہ کی سب سے اونچی چوٹی ماؤنٹ کیلی منجارو کو سر کرچکے ہیں۔

واضح رہے کہ اکانکیوا چوٹی جنوبی امریکہ کے مشہور پہاڑی سلسلے اینڈیز کی چوٹی ہے جسے سر کرنے کی کوشش میں سو سے زائد کوہ پیما ہلاک ہوچکے ہیں۔

یہ پہاڑ سمندر سے 22841 فٹ بلندی پر واقع ہے۔

ٹیلر آرمسٹرونگ کا مزید کہنا تھا ’آپ اس پہاڑ کے اوپر دنیا کے ماحول کو دیکھ سکتے ہیں محسوس کرسکتے ہیں۔ بادل آپ کے نیچے ہوتے ہیں اور یہاں موسم بے حد سرحد ہوتا ہے۔‘

ان کے والد نے خبر رساں ایجنسی ا ے پی کو بتایا کہ اس کارنامے کو انجام دینے سے پہلے ان کے بیٹے نے چھ ماہ تک تربیت لی۔

ان کا مزید کہنا تھا ’بیشتر لوگوں کو لگتا ہے کہ ٹیلر کو اس کے والدین نے ایسا کرنے پر مجبور کیا جبکہ سچائی بالکل اس کے برعکس ہے۔‘

ٹیلر کی عمر کی وجہ سے انہیں اس پہاڑ کو سر کرنے سے پہلے ججز کی جانب سے خصوصی اجازت دی گئی ہے۔

اس سے قبل سنہ دوہزار آٹھ میں امریکہ کے ہی دس سالہ میتھو مونز نے اس چوٹی کو سر کیا تھا۔