بیوی کو چونکانے کے چکر میں خود پھنس گیا

Image caption امدادی کارکنوں کو زیتون کا تیل استعمال کر کے انھیں نکالنا پڑا

آسٹریلیا میں پولیس نے ایک برہنہ شخص کو گھر کی واشنگ مشین سے بازیاب کیا۔ وہ اپنی بیوی سے آنکھ مچولی کھیلتے ہوئے مشین میں پھنس گئے تھے۔

اس شخص کے بارے میں بتایا جا رہا ہے کہ وہ سامنے سے کھلنے والی مشین میں چھپے ہوئے تھے تاکہ اپنی بیوی کو اچانک ڈرا سکیں۔

تاہم مشین میں گھسنے کے بعد وہ اس میں پھنس گئے اور امدادی کارکنوں کو زیتون کا تیل استعمال کر کے انھیں نکالنا پڑا۔

آگ بجھانے والے عملے اور طبی معاونین کے گروپ کو اس صورت حال میں مدد کے لیے طلب کیا گیا۔

یہ واقعہ سنیچر کو موراپنا کے قصبے میں پیش آیا جو وکٹوریا ریاست کے شہر میلبرن کے شمال میں واقع ہے۔

اس شخص کے بارے میں بہت کم تفصیلات سامنے آئی ہیں۔ بعض اطلاعات کے مطابق ان کی عمر 20 سال تھی۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق سارجنٹ مشل ڈی آراگو نے بتایا کہ ’یہ صرف ایک کھیل تھا جو الٹا پڑ گیا۔

’یہ کہنا درست ہو گا کہ وہ بہت شرمندہ تھے۔‘

دوسری جانب ایک اور پولیس افسر نے لوگوں کو گھریلو اشیا کے غلط استعمال کے بارے میں خبردار کیا۔

فرسٹ کانسٹیبل لوک انگرم نے کہا کہ ’میری تو تجویز یہی ہو گی کہ بجلی سے چلنے اشیا میں ایسے ہی نہ گھس جائیں یقیناً اس سے بہت سے مسائل پیدا ہو سکتے ہیں، جیسا کہ ہم نے اس کیس میں دیکھا ہے۔‘