صدر اولاند نے خاتون اول سے علیحدگی کا اعلان کردیا

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption فراسیسی اخبار کے مطابق ویلیری ہفتے کو اپنے فلیٹ میں منتقل ہو جائیں گی

فرانس کے صدر فرانسو اولاند نے باضابطہ طور پر اپنی ساتھی خاتون اول ویلیری ٹرائرویلر سے علیحدگی کا اعلان کر دیا ہے۔

انہوں نے فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کو بتایا کہ ان کی ’علیحدگی‘ ہو گئی ہے۔

اس سے قبل صدارتی دفتر نے ان اطلاعات کی تردید کی تھی کہ صدر اولاند خاتون اول سے علیحدگی اختیار کر رہے ہیں۔

فرانسیسی ذرائع ابلاغ نے ہفتے کو پہلے ہی خبریں دینا شروع کردی تھیں کہ صدر فرانسو اولاند نے باضابطہ طور پر اپنی ساتھی خاتون اول ویلیری ٹرائرویلر سے علیحدگی کا اعلان کریں گے۔

فرانسیسی صدر نے یہ اعلان اس وقت کیا جب ایک جریدے میں صدر کا اداکارہ ژولی گائییے سے معاشقے کی تصاویر چھاپیں۔

فرانسیسی صدر نے کبھی بھی 41 سالہ ژولی گائییے کے ساتھ اپنے معاشقے سے انکار نہیں کیا ہے۔ انہوں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ ان کا یہ معاشقہ اس وقت شروع ہوا جب ان کے ویلیری کے ساتھ روابط ’مشکل دور‘ سے گزر رہے تھے۔

اس معاشقے کی تصاویر منظر عام پر آنے کے بعد ویلیری ایک ہفتے ہسپتال میں زیر علاج رہی ہیں۔

ویلیری اتوار کے روز امدادی تنظیم کی جانب سے بھارت جا رہی ہیں۔

ہسپتال سے آنے کے بعد سے وہ سرکاری رہائش گاہ ہی میں رہائش پذیر تھی۔ تاہم ایک فراسیسی اخبار کے مطابق ویلیری ہفتے کو اپنے فلیٹ میں منتقل ہو جائیں گی۔

ویلیری کے ساتھ سفر کرنے والی ٹیم کے ایک رکن کا کہنا ہے ’فرانسو اولاند نے علیحدگی کے حوالے سے ویلیری سے بات کی اور ان کو مطلع کیا۔ ویلیری نے اس صورتحال کو قبول کیا اور صدر پر اس بارے میں بیان دینا چھوڑا ہے۔‘

یاد رہے کہ كلوزر میگزین نے اولاند اور اداکارہ ژولی گائییے کے مبینہ عشق پر سات صفحات کا مضمون چھاپا تھا۔

اس میں ایک تصویر میں دکھایا گیا ہے کہ ایک شخص گائییے سے ملنے آیا ہے جسے صدر اولاند بتایا گیا ہے۔

جس شخص کو صدر بتایا گیا ہے اس نے ہیلمٹ پہنا ہوا تھا اور وہ ایک سکوٹر پر گائییے کی رہائشی عمارت کے پاس آیا اور گیا تھا۔

اسی بارے میں