شراب خانے کو جرمن کامیابی کی قیمت ادا کرنا پڑی

Image caption آخر میں بیئر کا ایک گلاس چپس کے پیکٹ سے سستا ہو گیا تھا

جمہوریہ آئرلینڈ میں ایک شراب خانے کو جرمنی اور برازیل کے سیمی فائنل کے دوران اپنے گاہکوں کے لیے ایک خصوصی پیشکش خاصی مہنگی پڑی۔

آئرلینڈ کے علاقے گالوے کے ایک پب نے اعلان کیا کہ جب بھی کوئی ٹیم گول کرے گی تو بیئر کے 500 ملی لیٹر یا ایک پائنٹ کے گلاس کی قیمت میں 50 سینٹ کمی کر دی جائے گی۔

شراب خانے نے جرمنی کی ٹیم کے لیے جرمن بیئر ارڈنگر کا جبکہ برازیل کے لیے برازیلین بیئر برہما کا انتخاب کیا۔

میچ کے شروع میں بیئر کے گلاس کی قمیت چار یورو تھی اور میچ میں جرمنی کے یکے بعد دیگرے پانچ گول کرنے پر میچ کے پہلے ہاف کے اختتام تک بیئر کے گلاس کی قیمت کم ہو کر ڈیڑھ یورو تک پہنچ گئی۔

دوسری ہاف میں جرمن ٹیم نے مزید دو گول کر دیے اور یوں میچ کے آخری 11 منٹوں میں گاہکوں کو بیئر کا ایک بڑا گلاس 50 سینٹ کا پڑا۔

میچ کے آخری لمحات میں برازیل کے آسکر نے پہلا گول کیا اور یوں دوسری بیئر برہما کی قمیت میں 50 سینٹ کی کمی صرف چند سکینڈوں تک ہوئی۔

شراب خانے کے مالک گواگی میکنمارا کے مطابق اس میچ کے نتائج حیران کن تھے: ’ہمیں بہت جلد ہی مشکل صورتحال کا اندازہ ہو گیا تھا اور جب میں بار میں داخل ہوا تو میرے بار مینیجر کے چہرے پر پریشانی کے آثار نمایاں تھے۔

’اصل میں بیئر کا ایک گلاس چپس کے پیکٹ سے سستا ہو گیا تھا، تاہم گاہکوں نے بھی ذمہ داری کا مظاہرہ کیا اور وہ ایک وقت میں 15 سے 20 گلاسوں کے آرڈر نہیں دے رہے تھے۔‘

شراب خانے کی خصوصی پیشکش کی خبر جلد ہی سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر پھیل گئی اور دیکھا دیکھی میچ کے اختتام تک پب گاہکوں سے بھر گیا۔

قریبی شراب خانوں سے بھی لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے آنا شروع کر دیا اور جب بھی گول ہوتا تو خوب شور و غل کیا جاتا۔

میکنمارا نے پھر بھی ہمت نہیں ہاری اور دوسرے سیمی فائنل میں ارجنٹائن اور ہالینڈ کے میچ کے لیے بھی ایک ایک بیئر مخصوص کر دی۔ دوسرے سیمی فائنل میں شراب خانہ ایک بار پھر گاہکوں سے بھر گیا لیکن میکنمارا کو اس بار کسی پریشانی کا سامنا نہیں ہوا کیونکہ دونوں ٹیمیں مقررہ وقت میں گول کرنے میں ناکام رہیں اور میچ کا فیصلہ پنلٹی شوٹ آؤٹ پر ہوا۔