اینجیلینا جولی ہاتھیوں پر فلم بنائیں گی

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption اینجیلینا جولی اب کیمرے کے پیچھے اپنی فلم ’افریقہ‘ ڈائریکٹ کریں گی

ہالی وڈ کی مشہور اداکارہ اور ہدایت کارہ اینجیلینا جولی افریقہ نامی فلم کی ہدایات دیں گی۔

یہ فلم ہاتھیوں کی آبادی کے تحفظ کے لیے کوشاں رچرڈ لیکی کے بارے میں ہے جو ہاتھی دانت کے شکاریوں کے خلاف برسرپیکار ہیں۔

اس فلم کی سکرپٹ ایرک روتھ نے لکھا ہے جنھوں نے ماضی میں فلم ’فوریسٹ گمپ‘ کی کہانی لکھنے کی وجہ سے آسکر ایوارڈ حاصل کیا تھا۔

رچرڈ کینیا میں وائلڈ لائف سروس کے سابق سربراہ تھے اور غیر قانونی طور پر ہاتھیوں کے دانت کی تجارت کے خاتمے میں انھوں نے ایک اہم کردار ادا کیا۔

اینجیلینا کا کہنا ہے کہ : ’افریقہ اور اس کی ثقافت میرے دل کے بہت قریب ہے۔‘

کینیا میں ہاتھیوں اور گینڈوں کی آبادیوں کو ختم ہونے سے روکنے میں رچرڈ کا بہت بڑا ہاتھ ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ bbc
Image caption رچرڈ لیکی کا افریقہ میں ہاتھیوں کی آبادی کو بچانے میں بہت بڑا کردار ہے

انھوں نے شکاریوں کو روکنے کے لیے نیشنل پارک میں گن شپ ہیلی کاپٹرز بھیجنے جیسے کئی انتہائی اقدامات بھی اٹھایے ہیں۔

سنہ 1989 میں رچرڈ دنیا بھر میں معروف ہوئے جب انھوں نے نیروبی نیشنل پارک میں ہاتھی دانت کے بارہ ٹن ذخیرے کو جلا دیا۔

اینجیلینا کا کہنا ہے کہ ان کی فلم افریقہ ایک ایسے انسان کے بارے میں ہے جو ہاتھیوں کے خلاف ایک تنازع میں الجھ جاتا ہے۔

انھوں نے کہا کے اس تنازعہ میں الجھنے سے رچرڈ میں جانوروں کے تحفظ کی ذمہ داری کا ایک گہرا احساس جاگ جاتا ہے۔

’افریقہ‘ فلم کے پروڈیوسر ڈیوڈ ایلسن نے، جن کی کمپنی ’سکائی ڈانس‘ نے ’ٹرو گرٹ‘ اور ’جیک ریچر‘ جیسی فلمیں بنائیں، رچرڈ کو دنیا کے لیے ایک قابلِ تقلید انسان قرار دیا۔

ڈیوڈ نے کہا کہ افریقہ جیسی فلم کی کہانی دنیا کو سنائی چاہیے۔

اسی بارے میں