گاڑی بیچ دیں، دس لاکھ ڈالر لے لیں

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ہوزے موہیکا کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ اپنی لائف سٹائل کی وجہ سے دنیا کے سب سے غریب صدر ہیں

یوروگوائے کے صدر ہوزے موہیکا نے کہا ہے کہ انھیں اپنی فوکس ویگن بیٹل کار کے لیے دس لاکھ ڈالر کی پیشکش ہوئی ہے۔

ہوزے موہیکا کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ دنیا کے سب سے غریب صدر ہیں۔

انھوں نے بتایا کہ ایک عرب شیخ نے ان کی گاڑی خریدنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔

یوروگوائے کے صدر نے ہفت روزہ میگزین بسکویندا کو بتایا کہ اگر انھوں نے عرب شیخ کی پیشکش کو قبول کر لیا تو اس سے حاصل ہونے والی رقم سے غریب افراد کی مدد کی جائے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ ان کی گاڑی خریدنے کی پیشکش رواں سال کے شروع میں بولیویا میں ہونے والی بین الاقوامی سربراہی اجلاس میں کی گئی تھی۔

79 سالہ ہوزے موہیکا کے مطابق جب انھیں پہلی بار گاڑی بیچنے کی پیشکش ہوئی تو انھوں نے اس پر پوری طرح دھیان نہیں دیا تاہم اس کے بعد انھیں ایک اور آفر دی گئی جس کے بعد انھوں نے اس پر سنجیدگی سے غور کیا۔

انھوں نے کہا کہ ’ان کی گاڑی کے ساتھ کوئی وابستگی نہیں ہے‘ اور وہ اسے بخوشی نیلام کر دیں گے۔

یوروگوائے کے صدر نے کہا کہ اگر انھیں اپنی گاڑی کے عوض دس لاکھ ڈالر مل گئے تو وہ اس رقم کو بےگھر افراد کی مدد کے لیے چلنے والے پروگرام کے لیے وقف کر دیں گے۔

خیال رہے کہ یوروگوائے کے صدر ہوزے موہیکا ’پیپ‘ کے نام سے مشہور ہیں۔

وہ ایک خستہ حال فارم میں رہتے ہیں اور اپنی زیادہ تر تنخواہ خیرات کر دے دیتے ہیں۔

یوروگوائے کے حکام کے لیے اپنے اثاثے ظاہر کرنا لازمی ہے اور سنہ 2010 میں ان کی فوکس ویگن بیٹل کار کی مالیت 1,800 ڈالر تھی۔

اسی بارے میں