روم: سالِ نو کے آغاز پر پولیس اہلکار ’بیمار‘

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption اطالوی حکام نے پولیس کی بڑی تعداد میں غیرحاضریر پر تنقید کی ہے۔

اطلاعات کے مطابق روم میں سالِ نو کے آغاز کی تقریبات کے سلسلے میں جن پولیس افسران نے فرائض انجام دینے تھے ان میں سے تین چوتھائی ’بیماری‘ کی وجہ سے کام پر نہیں آئے۔

لا ریپبلیکا ویب سائٹ کے مطابق 1000 میں سے تقریباً 800 افسران اس موقع پر غیر حاضر تھے۔

ایک اندازے کے مطابق 600,000 افراد نئے سال کا استقبال کرنے کے لیے اطالوی دارالحکومت کی سڑکوں پر نکلے تھے اور اتنی بڑی تعداد میں پولیس افسران کی غیر حاضری کے باوجود میئر کے دفتر سے جاری ایک اعلامیے کے مطابق کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔

لیکن دوسری جانب اطالوی حکام نے پولیس کی بڑی تعداد میں غیر حاضری پر تنقید کی ہے۔

کابینہ کی وزیر مرینا مادیا نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک پیغام میں کہا ہے کہ اس میں ملوث افسران کے خلاف کارروائی کی جا سکتی ہے۔

روم پولیس کے سربراہ رافئیل کلیمینٹ نے غیر حاضری کو بلاجواز قرار دیتے ہوئے کہا کہ ’میں اس کی مذمت کرتا ہوں۔ ان افسران نے لوگوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈالا ہے اور مقامی پولیس فورس اور اس شہر کے اچھے نام کو بھی۔‘

اطالوی ذرائع ابلاغ کے مطابق پولیس کے کام کرنے کے نئے قوانین اور طریقوں پر گذشتہ کئی ماہ سے شہری حکومت اور پولیس کے درمیان تنازع چلا آ رہا ہے اور اب وہ ہڑتال کرنے کی تیاری کر رہے ہیں۔

یاد رہے کہ نئے سال کی شام روم کی میٹرو ٹرین سروس بھی ڈرائیوروں کی بڑی تعداد میں غیر حاضری کی وجہ سے تاخیر کا شکار رہی تھی۔

اسی بارے میں