دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے تک لاعلم تھے

Image caption سکویڈ بحری صدفیوں گے گروپ کو بھی کہتے ہیں جن کا بڑا سر اور آنکھیں نمایا کے علاوہ آٹھ بازو ہوتے ہیں

1۔ ناول نگار کرٹ وونیگٹ کی ’مین ان ہول‘ سیریز کی تقریبا نصف ناولوں میں کوئی شخص پریشانی میں مبتلا ہوتا ہے اور پھر پریشانی سے نکل آتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

2۔ مصنوعی ذہانت سے کسی مشین کو اٹاری ویڈیو گیم جیتنے کا ہنر سکھایا جا سکتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

3۔ سمندری جاندار سکوئڈ یا قیر ماہی کے پاس قوت پرواز ہے لیکن وہ رات کے اندھیرے میں ہی پرواز کرتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

4۔ بچوں کو سڑک عبور کروانے کے لیے موجود ’لولی پاپ مین‘ اگر راہ گیروں کے ساتھ ہاتھ ملاتے ہیں تو یہ ان کے کام کے قواعد کی خلاف ورزی ہو سکتی ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

5۔ برطانیہ کے پارلیمانی ایوانوں میں جو دو قسم کے چاکلیٹ سب سے زیادہ بکتے ہیں وہ ہیں کٹ کیٹ اور ٹوئکس۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption یہ رضا کار لوگوں کی سڑک پار کرنے میں مدد کرتے ہیں اور بھیڑ کو حظ فراہم کرتے ہیں

6۔ ایک زمانے میں گوگل کے مطابق بیٹلز کے سوانح نگار ہنٹر دیوس کی موت سنہ 1980 میں ہو گئی تھی حالانکہ وہ ابھی تک کتابیں لکھ رہے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

7۔ ایک ہی لباس مختلف لوگوں کو نیلا اور کالا یا سفید اور سنہرا نظر آ سکتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

8۔ یورپ میں سب سے زیادہ پن بال مشینوں کا ذخیرہ ہنگری کے شہر بڈاپسٹ کے ایک تہہ خانے میں ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

9۔ گندم برطانوی سواحل پر پہلے کی عام معلومات سے بھی دو ہزار سال قبل آ چکا تھا۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

10۔ برطانیہ کے فاسٹ فوڈ چین چکن کاٹج نے یوٹیوب پر اپنی انعامی تقریب کے عشائیے کی ایک فلم اپ لوڈ کی ہے جو ایک گھنٹے سے زیادہ دورانیے کی ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں

اسی بارے میں