سفید فام پولیس اہلکار پر قتل کی فردِ جرم عائد

تصویر کے کاپی رائٹ epa
Image caption ریاستی تفتیش کاروں نے مائیکل سلیگر نامی اس پولیس افسر کو فائرنگ کے واقعے کی ویڈیو دیکھنے کے بعد منگل کو گرفتار کیا تھا

امریکہ میں جنوبی کیرولائنا کے ایک سفید فام پولیس افسر پر فرار کی کوشش کرنے والے ایک سیاہ فام شخص کو گولی مار کر ہلاک کرنے کی فردِ جرم عائد کی گئی ہے۔

ریاستی تفتیش کاروں نے مائیکل سلیگر نامی اس پولیس افسر کو فائرنگ کے واقعے کی ویڈیو دیکھنے کے بعد منگل کو گرفتار کیا تھا۔

امریکہ: پولیس تشدد کے خلاف بڑے پیمانے پر مظاہرے

حکام کا کہنا ہے کہ گولیوں کا نشانہ بننے والا شخص والٹر لیمر سکاٹ پر پولیس افسر نے اس وقت گولیاں چلائیں جب وہ پہلے ہی انھیں سٹن گن کا نشانہ بنا چکے تھے۔ سٹن گن سے بجلی کا جھٹکا دے کا مفلوج کیا جاتا ہے۔

امریکی محکمۂ انصاف اس واقعے کی تحقیقات کرے گا۔

جنوبی چارلسٹن نامی علاقے کے میئر کیتھ سمے نے پولیس افسر کی گرفتاری کا اعلان کرتے ہوئے کہا ’جب آپ غلط ہیں تو غلط ہیں۔ جب آپ ایک غلط فیصلہ کرتے ہیں تو اس بات سے قطع نظر کے آپ کسی ڈھال کے پیچھے ہیں یا سڑک پر چلتے ہوئے عام شہری۔ اب آپ کو اس فیصلے کے ساتھ جینا ہوتا ہے۔‘

مقامی میڈیا کے مطابق یہ واقعہ سنیچر کو اس وقت پیش آیا جب سکاٹ کو گاڑی کی ٹوٹی ہوئی بتی کے باعث روکا گیا۔

نیو یارک ٹائمز میں شائع کی گئی اس واقعے کی ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ سکاٹ کے بھاگنے سے پہلے پولیس اہلکار اور ان کے درمیان مختصر لڑائی ہوئی۔ جس کے بعد افسر نے بھاگتے ہوئے سکاٹ پر کئی گولیاں چلائیں۔

فائرنگ کا یہ واقعے ایسے میں پیش آیا ہے جب پہلے ہی امریکہ میں پولیس اہلکاروں کے ہاتھوں شہریوں پر فائرنگ کی جانچ ہو رہی ہے۔ بالخصوص ایسے واقعات کی جن میں سفید فام پولیس اہلکاروں نے سیاہ فام مشتبہ لوگوں پر گولیاں چلائیں۔

اسی بارے میں