دس چیزیں جن سے ہم لاعلم تھے

تصویر کے کاپی رائٹ AP

1۔برطانیہ میں لبرل ڈیموکریٹ پارٹی کے سابق رہنما لارڈ ایش ڈاؤن نے جماعت میں اپنے جانشین کو بتایا تھا کہ وہ خارپشت کھایا کرتے تھے۔

مزید جاننے کے لیے (ایوننگ سٹینڈرڈ)

2۔لوگ خم دار گلاس کی نسبت سیدھے گلاس سے بیئر آہستہ پیتے ہیں۔

مزید جاننے کے لیے (ڈیلی ٹیلی گراف)

3۔ برطانوی بینڈ پلپ کا گانا ’ کامن پیپل‘ ممکنہ طور پر یونان کے وزیرِ خزانہ یانس وروفکس کی اہلیہ دانیا ستارتو کے بارے میں لکھا گیا ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں

4۔ 1970 کی دہائی تک شمال مشرقی انگلستان میں کنزورویٹو جماعت کے امیدوار سرخ، لیبر کے امیدوار سبز اور لبرل امیدوار نیلے بیج پہنا کرتے تھے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں

5۔ پاپ موسیقی کی دنیا میں تین انقلاب 1964، 1982 اور 1991 میں آئے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ’ کامن پیپل‘ ممکنہ طور پر یونان کے وزیرِ خزانہ یانس وروفکس کی اہلیہ دانیا ستارتو کے بارے میں ہے

6۔پیاز کے سونے کا پانی چڑھے خلیوں سے مصنوعی بافتیں بنائی جا سکتی ہیں۔

مزید جاننے کے لیے (دی سمتھسونیئن)

7۔ انڈیا تاریخ کا سب سے زیادہ تیزی سے سفر کرنے والا ’براعظم‘ ہے۔

مزید جاننے کے لیے (ڈیلی میل)

8۔ کروڑپتی افراد کو سب سے زیادہ پشیمانی اپنے خاندان سے تعلقات میں ہونے والی غلطیوں پر ہوتی ہے۔

مزید جاننے کے لیے (دی انڈیپنڈنٹ)

9۔ الیکشن کی کوریج کے دوران مستعد رہنے کے لیے ڈیوڈ بمبلبی کیلے کھاتے اور سگار پیتے ہیں جبکہ جیریمی پیکسمین جیلی کھایا کرتے تھے۔

مزید جاننے کے لیے (نیوز نائٹ/یو ٹیوب)

10۔ اٹلی میں مذہب سے جڑی اشیا کے کاروبار کے بازار کا حجم تین ارب 40 کروڑ ڈالر ہے اور یہ رقم شراب کی برآمد سے حاصل ہونے والی رقم سے زیادہ ہے۔

مزید جاننے کے لیے کلک کریں

اسی بارے میں