فلاڈیلفیا میں ٹرین پٹڑی سے اتر گئی، پانچ افراد ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ایمٹریک سرکاری ٹرین سروس ہے اور ہرسال کروڑوں افراد کو خدمات فراہم کرتی ہے

امریکہ کی مشرقی ریاست فلاڈیلفیا میں حکام کا کہنا ہے کہ ایک مسافر ٹرین کو پیش آنے والے حادثے میں پانچ افراد ہلاک اور 59 زخمی ہوگئے ہیں۔

نیویارک اور واشنگٹن کے درمیان سفر کرنے والی ایمٹریک کی اس ریل گاڑی کے 10 ڈبے منگل کی شب پٹڑی سے اتر گئے۔

حادثے کی اطلاع ملتے ہیں امدادی کارروائیاں شروع کر دی گئیں اور امدادی کارکن ریل کی بوگیوں میں پھنسے لوگوں کو نکالنے میں مصروف دکھائی دیے۔

مقامی ہسپتال نے بتایا ہے کہ حادثے کے بعد 50 سے زیادہ زخمیوں کو ہسپتال میں داخل کرایا گیا ہے جبکہ بہت سے لوگوں کو معمولی چوٹیں بھی آئی ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption اس پر 240 افراد سوار تھے اور بہت سے لوگوں کو معمولی چوٹیں آئي ہیں

ایک ویب سائٹ این بی سی 10 ڈاٹ کام کے مطابق ٹرین پر تقریبا 240 مسافر سوار تھے۔ حادثے کی وجہ فوری طور پر معلوم نہیں ہو سکی ہے۔

جائے حادثہ سے ارسال کی جانے والی تصاویر میں زخمیوں کو سٹریچر پر لے جاتے دیکھا جا سکتا ہے جبکہ آگ بجھانے والا عملہ سیڑھیوں کے ذریعے بوگیوں پر چڑھ کر یہ دیکھنے کی کوشش کر رہا ہے کہ کہیں کسی ڈبے میں کوئی شخص پھنسا ہوا تو نہیں۔

امریکی کانگریس کے سابق رکن پیٹرک مرفی نے ٹوئیٹ کیا ہے کہ جب ٹرین کو حادثہ پیش آيا تو وہ اسی ٹرین سے سفر کر رہے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption آگ بجھانے والے عملے سیڑھیوں کا استعمال کرتے نظر آئے

انھوں نے لکھا: ’میں ایمٹریک ٹرین پر ہوں جو ابھی حادثے کا شکار ہوئی ہے۔ میں ٹھیک ہوں۔ دوسروں کی مدد کر رہا ہوں، زخمیوں کے لیے دعا کریں۔‘

خبر رساں ادارے اے پی کے ایک ملازم پال چیئنگ نے کہا کہ وہ خوش قسمت ہیں کہ ٹرین کے پیچھے والے ڈبے میں تھے کیونکہ ’آگے والے ڈبے بہت خستہ حالت میں ہیں۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ انھوں نے ’بعض لوگوں کو کچلا ہوا دیکھا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption حادثے کی فوری وجہ معلوم نہیں ہو سکی ہے تاہم حکام نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے

پولیس نے لوگوں کو اس جگہ سے دور رہنے کی ہدایت کی ہے تاکہ امدادی ٹیم کو آسانی اور زخمیوں کا بہترطور پر علاج ہو۔

اس علاقے کو سیل کر دیا گیا ہے۔

ایمٹریک امریکہ کی سرکاری ٹرین سروس ہے اور ہر سال کروڑوں افراد کو خدمات فراہم کرتی ہے۔

اسی بارے میں