اسامہ بن لادن کے کمپاؤنڈ سے ملنے والی مزید دستاویزات جاری

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption امریکہ کی خصوصی افواج نے القاعدہ کے رہنما اسامہ بن لادن کو پاکستان میں ایک خصوصی آپریشن کے دوران ہلاک کر دیا تھا

امریکی حکام نے القاعدہ کے رہنما اسامہ بن لادن کے کمپاؤنڈ سے ملنے والی مزید دستاویزات جاری کی ہیں جن میں کتابیں، خطوط اور القاعدہ کا آپریشن چلانے کے حوالے سے معلومات شامل ہیں۔

امریکہ کی خصوصی افواج نے سنہ 2011 میں پاکستان کے شہر ایبٹ آباد میں القاعدہ کے رہنما اسامہ بن لادن کو ایک خصوصی آپریشن کے دوران ہلاک کر دیا تھا۔

اسامہ کی ہلاکت:’ پردے کے پیچھے سے گفتگو ہو رہی ہے‘

اس کارروائی کے دوران کمپاونڈ میں موجود دستاویزات کو بھی امریکی افواج نے اپنے قبضے میں لے لیا تھا۔

اسامہ بن لادن کے کمپاونڈ میں عربی میں کی گئی خط و کتابت کے ساتھ ساتھ انگریزی زبان میں بھی کتابیں موجود تھیں۔ اسامہ بن لادن کی کتابوں کی الماری میں عسکری نظریات اور معشیت پر لکھی گئی کتابیں بھی تھیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ اس حوالے سے مزید دستاویزات جلد جاری کی جائیں گی۔

ڈائریکٹر آف نیشنل انٹیلجنس کا کہنا ہے کہ دستاویزات شائع کرنے سے پہلے ان کا ’کڑا‘ جائزہ لیا گیا۔

امریکی حکام کی جانب سے شائع کی گئی دستاویزات میں خطوط، نوٹس اور القاعدہ کا آپریشن چلانے کے حوالے سے مواد کا ترجمہ شامل ہے۔ ایبٹ آباد کے کمپاونڈ سے ملنے والے زیادہ تر دستاویزات عربی میں تھیں۔اور ان عربی مسودہ بھی جاری کیے گئے ہیں۔

ان دستاویزات میں فرانس کے عنوان کے حوالے سے بھی مواد جاری کیا گیا ہے۔ جس میں فرانس کے کالجوں کی رپورٹس اور فرانس کی فوج، سیاست اور معیشت کے حوالے سے آرٹیکلز شامل ہیں

امریکہ کی جانب سے جاری کردہ خفیہ دستاویزات کے مطابق کمپاونڈ سے ’خودکشی روکنے کی رہنمائی‘ کے عنوان سے ایک مسودہ بھی ملا ہے۔

معلومات کے مطابق اسامہ بن لادن کے کمپاونڈ سے کچھ نقشے اور ویڈیو گیمز کے کھیلنے کے گائیڈ ملی ہیں جبکہ بوب وڈورڈز کی کتاب ’اوبامہ وار‘ بھی ملی۔

اس سے قبل سنہ 2012 میں ویسٹ پوائینٹ میں امریکی ملٹری اکیڈمی نے اسامہ بن لادن کی تلاش کے لیے کئے گئے خفیہ آپریشن کے دوران ملنے والی چند دستاویزات جاری کی گئی تھیں۔

اسی بارے میں