کیمرون اور پوتن شام پر مذاکرات کے لیے رضامند

پوتن، کیمرون تصویر کے کاپی رائٹ Getty PA
Image caption دونوں رہنما شام پر مذاکرات پر تو متفق ہیں لیکن یوکرین پر اختلافات جوں کے توں موجود ہیں

برطانوی وزیرِ اعظم ڈیوڈ کیمرون اور روسی صدر ولادی میر پوتن نے فون پر بات چیت کے دوران اس بات پر رضامندی ظاہر کی ہے کہ شام کے مسئلے کے حل کے لیے سینیئر برطانوی اور روسی اہلکاروں کے درمیان مذاکرات دوبارہ شروع ہونے چاہییں۔

ڈاؤننگ سٹریٹ کے مطابق سکیورٹی کے مشیروں کے درمیان مذاکرات کو دوبارہ شروع کرنے کی بات دونوں رہنماؤں کے درمیان پیر کو فون پر ہوئی۔

ترجمان کے مطابق صدر پوتن نے وزیرِ اعظم کیمرون کو برطانوی انتخابات میں کامیابی پر مبارکباد کے لیے فون کیا تھا۔

ترجمان نے کہا کہ دونوں رہنماؤں کے درمیان 30 منٹ لمبی بات ہوئی جس میں شام اور یوکرین زیرِ بحث رہے۔

’دونوں رہنما اس بات پر متفق تھے کہ یہ روس اور برطانیہ کے مفاد میں ہے کہ شام کی خانہ جنگی کا حل ڈھونڈا جا سکے۔‘

ترجمان کے مطابق انھوں نے اس بات پر رضامندی ظاہر کی کہ ان کے قومی سلامتی کے مشیر شام کی لڑائی کے متعلق مذاکرات دوبارہ شروع کریں۔

ڈاؤننگ سٹریٹ نے یہ بھی کہا کہ دونوں رہنماؤں نے اس بات پر بھی اتفاق کیا کہ انھیں شام کی ’اعتدال پسند حزبِ مخالف‘ سے ڈائیلاگ جاری رکھنا چاہیئے تاکہ مسئلے کا حل ڈھونڈا جا سکے۔

ترجمان کے مطابق یوکرین میں روسی کردار پر برطانوی وزیرِ اعظم کو لگا کہ دونوں کے درمیان ’گہرے اختلافات‘ ابھی تک موجود ہیں لیکن اب ترجیح یہ ہے کہ منسک معاہدے کو پوری طرح لاگو کیا جا سکے۔

فروری میں منسک میں ہونے والے مذاکرات میں یوکرین کے متعلق امن منصوبہ تشکیل دیا گیا تھا۔

ترجمان نے کہا کہ ’وزیرِ اعظم نے گفتگو کے آخر میں کہا کہ برطانیہ اور روس نے ایران کے جوہری بحران پر کامیابی کے ساتھ مل کر کام کیا تھا اور ان کو امید ہے کہ آنے والے برسوں میں روس اور برطانیہ مل کر باہمی مفادات کے معاملات میں مزید بحرانوں پر کام کریں گے۔‘

یوکرین میں روس کے کردار اور مغربی فضائی حدود کی خلاف ورزی کی وجہ سے روس اور مغربی میں تناؤ بڑھا ہے۔

یہ بات چیت اس وقت ہوئی ہے جب روس کی مسلح افواج بڑے پیمانے پر فوجی مشقیں کر رہی ہے۔

چار روزہ مشقوں میں تقریباً 250 جہاز اور 12,000 فوجی حصہ لے رہے ہیں جس کو روس کی وزارتِ دفاع نے ’بڑے پیمانے پر حیران کن معائنہ‘ کہا ہے۔

امکان ہے کہ مشقوں کے دوران کروز میزائل کا بھی تجربہ کیا جائے گا۔

اسی بارے میں