یونان کے بحران میں’ڈریکما‘ اور’ٹروئکا‘ کیا ہے

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption یونان میں عالمی قرض داروں کی شرائط پر پانچ جولائی کو ریفرینڈم ہو رہا ہے

اگر آپ کو نہیں معلوم کہ ’ڈریکما‘ کیا ہے اور ’ٹروئکا‘ کسے کہتے ہیں تو ہم آپ کے لیے ان اور ان جیسے کچھ دوسرے الفاظ کی وضاحت کر دیتے ہیں جو یونان کے قرضوں کے بحران کے سلسلے میں آپ نے پڑھے ہوں گے مگر شاید پوری طرح پہچان نہ پائے ہوں۔

آسٹیریٹی یعنی کفایت شعاری یا سادگی

یہ اصطلاح پورے یورپ کی اس معاشی پالیسی کے بارے میں بولی جاتی ہے جس کے تحت حکومتی اخراجات کو کم کر کے خسارے اور قرض کو گھٹایا جاتا ہے۔ یونان کو دیا جانے والا بیل آؤٹ قرض کفایت شعاری کے اقدامات سے مشروط کیا گیا تھا۔ لیکن جنوری میں نئی آنے والی حکومت نے جو کفایت شعاری کے خلاف تھی، اسے مسترد کر دیا۔

ڈریکما یا قدیم یونانی کرنسی

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ڈریکما یونان کی پرانی کرنسی ہے

2001 میں یورو کو بطور کرنسی اختیار کرنے سے قبل یونان کی کرنسی کا نام ’ڈریکما‘ تھا۔ اس لفظ کا ترجمہ ’مٹھی بھر‘ ہے اور یہ دنیا کی قدیم ترین کرنسیوں میں سے ایک اور یورپ میں سب سے پرانی کرنسی ہے۔ ڈریکما گیارہ سو قبل مسیح بھی پائی جاتی تھی اور ممکن ہے جلد ہی یہ پھر یونان میں رائج ہو جائے۔

گریگزٹ

یہ’انگریزی کے لفظ ’گریِک ایگزٹ‘ یعنی یونان کے یورو زون سے باہر نکلنے کا مخفف ہے۔ یہ اصطلاح سب سے پہلے2012 میں اقتصادی ماہرین نے گھڑی تھی لیکن اب حقیقت کے قریب اور ممکن لگتی ہے۔ اس کا ’بریگزٹ‘ یعنی برطانیہ کے یورپی اتحاد کو چھوڑنے کے امکان سے کوئی تعلق نہیں۔

گریفرنڈم

یہ لفظ بھی دو الفاظ کو جوڑ کر بنایا گیا ہے اور ’گریِک ریفرینڈم‘ یعنی یونانی ریفرینڈم کا مخفف ہے۔ یونان کے قرضوں کے بحران کا کیا بنے گا اس کا فیصلہ اب لوگوں کے ہاتھوں میں ہے۔ یونان نے اعلان کیا ہے کہ پانچ جولائی کو عوام سے پوچھاجائے گا کہ قرض کی شرائط مانی جانی چاہییں یا نہیں ۔

ای سی بی یعنی یورپی سنٹرل بینک

ای سی بی یوروزون کا مرکزی بینک ہے اور یورو کرنسی کی مالیاتی پالیسی وضع کرنے کا ذمہ دار ہے۔

ای ایل اے

اس کا مطلب ہے ہنگامی کیش جو ای سی بی نے یونان کو دیا ہے تاکہ یونانی بینک اس وقت تک چلتے رہیں جب تک یونان قرض دینے والوں سے مذاکرات کر رہا ہے۔

یورو زون

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

اس اصلاح کا مطلب یورپ کے وہ 19 ملک ہیں جن کی کرنسی یورو ہے۔ ابھی تک اس نے مالیاتی بحران کو برداشت کیا ہے اور یونان کو اسی کرنسی کا حصہ رہنے دیا ہے۔ لیکن اب سنگین خدشات ہیں کہ اگر یونان باہر نکل گیا تو اس کرنسی کا مستقبل کیا ہوگا۔

ایکسپوژر

یونان کو یورپ کے لگ بھگ سبھی ممالک نے قرض دیا ہے اور اگر یونان یہ قرض ادا نہ کر پایا تو یہ سب ممالک مشکل میں پڑ جائیں گے۔ اقتصادی لحاظ سے یورو زون کے سب سے بڑے ملک جرمنی اور فرانس نے یونان کو سب سے زیادہ قرض دیا ہے لیکن سلووینیا اور سپین جیسے ملک جن کی معیشت اتنی مضبوط نہیں ان کے مشکل میں پھنس جانے کا خطرہ زیادہ ہے۔

آئی ایم ایف

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption آئی ایم ایف ممالک کو مالی مشکلات سے نکالنے کے لیے قرض دیتا ہے

عالمی مالیاتی فنڈ دوسری عالمی جنگ کے بعد قائم ہوا تھا اور اس کا مقصد حکومتووں کی مالی امداد کرنا تھا۔ یہ ادارہ قرض میں پھنس جانے والے ممالک کو مالی مشکلات سے نکالنے کے لیے قرض دیتا ہے۔ 2008 کے مالیاتی بحران کے بعد اس نے یونان، آئرلینڈ اور پرتگال کو بیل آؤٹ پیکج دیے ہیں۔

پیپرولوجی

یونان اور یورپی اتحاد کے مذاکرات کاروں درمیان دستاویزات کا تبادلہ بہت عرصے سے ہو رہا ہے لیکن اس کا کوئی نتیجہ نہیں نکلا۔ یہی وجہ ہے کہ اس عمل کا نام پیپرولوجی پڑ گیا۔

ٹروئکا

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption یونان اور یورپی اتحاد کے مذاکرات کاروں درمیان دستاویزات کا تبادلہ بہت عرصے سے ہو رہا ہے

یہ روسی زبان کا لفظ ہے جس کا مطلب ہے تین کا گروہ۔ اس لفظ کو پہلے یونانی صحافیوں نے اور پھر دوسروں نے یورپی اتحاد، یورپی سنٹرل بینک اور آئی ایم ایف کے لیے استعمال کیا۔

یہ تینوں ادارے یونان میں کفایت شعاری کے اقدامات کی نگرانی کے ذمہ دار ہیں۔ یونان کے نئے وزیرِ اعظم ایلیکس سیپرس نے فروری میں عہد کیا تھا کہ وہ ’ٹروئکا‘ کے وجود کو نہیں مانیں گے۔

اسی بارے میں