دو سال میں آسٹریلیا کا چوتھا وزیرِاعظم

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption یہ امید کی جا رہی ہے کہ ٹونی ایبٹ کی جانب سے آسٹریلیا کے گورنر جنرل کو اطلاع دینے اور مستعفی ہونے کے فوراً بعد نئے وزیر اعظم کا انتخاب کیا جائے گیا

آسٹریلیا میں وزیر اعظم ٹونی ایبٹ کے اپنی جماعت کی قیادت کا انتخاب ہارنے کے بعد اب ملک میں ایک نئے وزیر اعظم کا انتخاب متوقع ہے۔

ٹونی ایبٹ کو انہی کی جماعت کے سینیئر رہنما مالکم ٹرن بل نے دائیں بازو کی مرکزی جماعت لبرل پارٹی کے رہنما کے عہدے کے لیے چیلنج کیا تھا جس میں ٹونی ایبٹ کو شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

عجلت میں منعقد کیے گئے قیادت کے انتخاب میں ٹونی ایبٹ کو کل 44 ووٹ پڑے جبکہ ان کے مدِ مقابل ٹرن بل کو 54 ووٹ ملے۔

لبرل پارٹی کے نئے قائد سنہ 2013 کے بعد آسٹریلیا میں چوتھے وزیراعظم ہوں گے۔

مالکم ٹرن بل کا کہنا ہے کہ ان کے خیال میں پارلیمان اپنی مدت مکمل کرے گی اور عام انتخابات نہیں ہوں گے۔

یہ امید کی جا رہی ہے کہ ٹونی ایبٹ کی جانب سے آسٹریلیا کے گورنر جنرل کو اطلاع دینے اور مستعفی ہونے کے فوراً بعد نئے وزیر اعظم کا انتخاب کیا جائے گیا۔

پیر کو لبرل پارٹی کے ارکانِ پارلیمان کی ملاقات کے دوران پارٹی رہنما کے لیے ووٹنگ کی گئی جس میں آسٹریلیا کی وزیرِ خارجہ جولی بشپ کو پارٹی کی ڈپٹی لیڈر برقرار رکھنے کے لیے بھی ووٹ ڈالے گئے۔

Image caption مالکم ٹرن بل کا کہنا ہے کہ ان کے خیال میں پارلیمان اپنی مدت مکمل کرے گی اور عام انتخابات نہیں ہوں گے

اس انتخاب کے نتائج کے اعلان کے بعد بات کرتے ہوئے ٹرن بل نے سابقہ رہنما کے بطور وزیراعظم ’خوفناک کارناموں‘ کی تعریف کی۔

نو منتخب پارٹی لیڈر نے کہا کہ ’آسٹریلیا کو ایک ایسے قائد کی ضرورت ہے جو اقتصادی نظریہ رکھتا ہو اور ایک ایسی قیادت جو درپیش چیلنجوں سے نمٹ سکے۔‘

انھوں نے مزید کہا ’میں ایک ایسی لبرل حکومت کی قیادت کروں گا جو انفرادی اور اجتماعی آزادی کی ضامن ہو۔‘

واضح رہے کہ ٹرن بل مستعفی ہونے اور قیادت سنبھالنے کا دعوی کرنے سے قبل ٹونی ایبٹ کے دور حکومت میں بطور وزیر اطلاعات خدمات سرانجام دے چکے ہیں۔

ان کی جماعت میں موجود بہت سے لوگ ہم جنس شادیوں اور ماحولیاتی تبدیلیوں کی حمایت کرنے کی وجہ سے انھیں پسند نہیں کرتے ہیں۔

اس سے قبل پیر کو ہی مالکم ٹرن بل کا کہنا تھا کہ اگر ایبٹ قائد برقرار رہے تو اتحادی حکومت آئندہ انتخاب ہار جائے گی۔

خیال رہے کہ اپنی مدت مکمل کرنے والے آخری آسٹریلوی وزیراعظم جان ہارورڈ تھے انھوں نے اقتدار سنہ 2007 میں چھوڑا تھا۔

اسی بارے میں