پوپ نے متنازع لاطینی پادری کو سینٹ کا درجہ دے دیا

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پوپ نے اپنی مادری زبان لاطینی میں بات کرتے ہوئے یہ اعلان واشنگٹن میں ہونے والے ایک مذہبی اجتماع سے کیا جس میں 25000 افراد نے شرکت کی

امریکہ کے پوپ فرانسس کے اٹھارویں صدی کے پادری ہونی پیرو سیرا کوسینٹ نامزد کرنے کے فیصلے پر جہاں ہسپانوی کیتھولک خوشی منارہے ہیں، وہیں کچھ مقامی امریکی اس کو تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔

سیرا، جنھوں نے اپنی زندگی موجودہ کیلیفورنیا میں گزاری، امریکہ میں سینٹ کا درجہ حاصل کرنے والے پہلے شخص ہیں۔

چرچ جانے والے لاطینی باشندوں کا کہنا ہے کہ سیرا کو یہ اعزا امریکی چرچ کی ہسپانوی تاریخ کے اعتراف میں بہت پہلے ہی مل جانا چاہیے تھا۔

لیکن مقامی امریکیوں کی تنظیمیں سیرا پر امریکہ کے آبائی لوگوں کی نسل اور تہذیب کو تباہ کرنے میں مددگار بننے کا الزام لگاتے ہیں۔

سیرا سینٹ فرانسیسیئن کے پیروکار تھے جنھوں نے اٹھارویں صدی عیسوی میں کیلیفورنیا میں عیسائی مذہب متعارف کروایا۔

مقامی امریکیوں کا کہنا ہےکہ انھوں نے ہسپانوی فاتحین کے ہاتھوں ہزاروں مقامی امریکیوں کے قتل میں اہم کردار ادا کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption مقامی امریکی ان فیصلے سے خوش نہیں ہیں، اور ان کا کہنا ہے کہ سیرا نے ہسپانوی فاتحین کے ہاتھوں ہزاروں مقامی امریکیوں کے قتل میں اہم کردار ادا کیا تھا

لیکن ان کا دفاع کرنے والوں کا اصرار ہے کہ انھوں نے اس لڑائی میں اعتدال پسند کا کردار ادا کیا تھا۔

پاپائے روم جو امریکہ کے پہلے سرکاری دورہ پر ہیں، ہونی پیرو سیرا کا دفاع کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ انھوں نے مقامی امریکیوں کی مدد کی تھی۔

پوپ نے بدھ کو کہا کہ ’سیرا چرچ کی یکجہتی کی علامت تھے جس کا اعتراف کیا گیا ہے۔ آج ہم ان ہی کی طرح کہنے کے قابل ہیں، آگے بڑھو اور بڑھتے چلے جاؤ۔‘

پوپ نے یہ اعلان اپنی مادری زبان ہسپانوی میں بات کرتے ہوئے واشنگٹن میں ہونے والے ایک مذہبی اجتماع سے کیا جس میں 25000 افراد نے شرکت کی۔

پوپ نے باوجود تنقید اپنا یہ فیصلہ برقرار رکھا، جس پر اس سال جنوری میں یہ بحث بھی چھڑ گئی تھی کہ پوپ نے سیرا کو سینٹ کا درجہ دیتے وقت اس معیار کو مدِنظر نہیں رکھا جس میں سینٹ کا درجہ حاصل کرنے والے شخص سے کم از کم دو معجزوں کا منسوب ہونا لازمی ہے۔

اسی بارے میں