جولین اسانژ کی پولیس نگرانی ختم کر دی گئی

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ریپ کے الزام میں برطانیہ سے سویڈن ملک بدری سے بچنے کی لیے مسٹر اسانژ نے ایکواڈور کے سفارت خانے میں پناہ لے رکھی ہے

لندن کی میٹروپولیٹن پولیس نے کہا ہے کہ سنہ 2012 سے ایکواڈور کے سفارت خانے میں پناہ گزین وکی لیکس کے بانی جولین اسانژ کی مستقل پولیس نگرانی ہٹا دی گئی ہے۔

ریپ کے الزام پر برطانیہ سے سویڈن ملک بدری سے بچنے کی لیے مسٹر اسانژ نے سفارت خانے میں پناہ لی ہوئی ہے، جب کہ سفارت خانے کے باہر برطانوی پولیس تعینات تھی۔

مسٹر اسانژ ریپ کرنے کی تردید کرتے ہیں۔

سویڈن: اسانژ کے وارنٹ گرفتاری کے خلاف اپیل مسترد

پولیس کی نگرانی کا تخمینہ ایک کروڑ 20 لاکھ پاؤنڈ بتایا گیا ہے۔ میٹروپولیٹن پولیس کا کہنا ہے کہ پولیس کی مستقل نگرانی ’تناسب سے نہیں ہے۔‘

پولیس فورس نے ایک بیان میں کہا کہ ادارے کے ’ذرائع محدود‘ ہیں اور شہریوں کو کئی دوسرے مجرمانہ خطرات لاحق ہیں۔

لیکن پولیس نے اپنے بیان میں یہ بھی کہا کہ وہ اسانژ کو گرفتار کرنے کے لیے ’کئی قسم کے ظاہر اور خفیہ حربوں‘ کا استعمال کرے گی۔

مسٹر اسانژ نے ملک بدری سے بچنے کے لیے سفارت خانے میں پناہ اس خوف سے لی تھی کہ خفیہ امریکی دستاویزات شائع کرنے کی وجہ سے انھیں امریکہ بھیج دیا جائے گا جہاں پر ان پر مقدمہ چلایا جا سکتا ہے۔

اسی بارے میں