صدر کے لیے پھر چھوٹی ٹوپی، اہلکار معطل

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption کہا جا رہا ہے کہ صدر کے دفتر سے اس بارے میں کوئی شکایت نہیں کی گئی تھی

زمبابوے کی ایک یونیورسٹی کے ایک اہلکار کو اس لیے معطل کر دیا گیا کیونکہ انھوں نے صدر رابرٹ موگابے کے لیے غلط ناپ کی گریجوایشن کیپ بھجوائی۔

صدر موگابے غلط تقریر پڑھ گئے

مقامی میڈیا میں رپورٹ کیے جانے والے معطلی کے نوٹس میں کہا گیا ہے کہ یونیورسٹی کے نائب رجسٹرار تاکاویرا نے یونیورسٹی کے لیے شرمندگی کا سامان پیدا کیا کیونکہ انھوں نے 92 سالہ صدر موگابے کے لیے ایسی ٹوپی بھجوائی جو ان کے سر کے لیے بہت چھوٹی تھی۔

تاکاویرا نے ان الزامات کی تردید کی ہے۔ کہا جا رہا ہے کہ صدر کے دفتر سے اس بارے میں کوئی شکایت نہیں کی گئی تھی۔

بی بی سی کے نامہ نگار کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے صدر موگابے کا ممکنہ غصہ ٹھنڈا کرنے کے لیے از خود کیا گیا ہے۔

نامہ نگاروں کے مطابق گذشتہ برس کی تقریب میں بھی صدر کے خطاب کے دوران محسوس کیا گیا کہ گریجوایشن کیپ صدر کے سر پر پوری نہیں آئی تھی۔

ہمارے نامہ نگار کے مطابق اس سال بھی صدر کے لیے نئی ٹوپیاں بنوائیں گئیں۔ ایک سرکاری اہلکار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بی بی سی کو بتایا کہ ڈرائیور ناپ کے لیے ٹوپیاں لے کر آیا تھا لیکن صدر کے محافظوں نے اسے باہر سے ہی لوٹا دیا۔

اسی کا نیتجہ تھا کہ دو اکتوبر کو ہونے والی تقریب میں صدر کو ایک بار پھر اپنے سر سے چھوٹی ٹوپی پہننی پڑی۔

تاکاویرا یونیورسٹی انتظامیہ کے اس اقدام کو ملک کی لیبر کورٹ میں چیلنج کرنے والے ہیں۔

اسی بارے میں